قومی خزانہ خالی،قرضوں سے نکلنے کیلئے خود کو بدلنا ہوگا:وزیر اعظم


اسلام آباد( 24نیوز )وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے قومی خزانہ خالی ہے، آگے بڑھنے اورقرضوں سے نکلنے کیلئے خود کوبدلنا ہوگا،ایسے منصوبے بنائے گئے جن سے قرض بڑھا،حکومت روزانہ قرضوں پر6ارب روپے سود ادا کررہی ہے۔
وزیر اعظم عمران خان اسلام آباد میں سرکاری ملازمین سے خطاب کررہے تھے،انہوں نے کہا کہ حکومتیں آتی جاتی رہتیں لیکن سرکاری ملازمین مستقل رہتے ہیں،سرکاری ملازمین کی مدد سے ملکی معیشت بہتربنانے میں مدد ملے گی۔
وزیراعظم عمران خان نے ملک پرقرضوں کا ذمہ دار سابق حکومتوں کی پالیسیوں کو قراردیا،بولے ملک پر30ہزار ارب کا قرض ہے میٹروسمیت بہت سے منصوبے قرض لے کربنائے گئے۔
وزیراعظم نے پھراحتساب کو ملک کی بقاءکہا، عمران خان نے کہا کرپشن کرنے والے ملک کو تباہ کرتے ہیں،غلطی اور فنانشل چوری میں فرق ہونا چاہیے،وزیراعظم نے کہا قوم اورفوج ایک ہوں توفوج 6لاکھ سے بڑھ کر20 کروڑ ہوجاتی ہے، گورننس کی بہتری پر زور دیا،، عمران خان نے سرکاری ملازمین سے کہا یقین دلاتاہوں سیاسی مداخلت نہیں ہوگی،،آپ سے غلطی ہوئی تو آپ کے ساتھ کھڑا ہوگا۔