شریف خاندان کےخلاف احتساب عدالت میں پاناما ریفرنس کیس کی سماعت


اسلام آباد(24نیوز) شریف خاندان کےخلاف احتساب عدالت میں پاناما ریفرنس کیس کی سماعت ،استغاثہ کے 4 گواہوں کے بیانات ریکارڈکیے گئے، شریف خاندان کے وکیل نے ضمنی ریفرنسز پر مزید وقت مانگ لیا، عدالت نے نواز شریف ، مریم نواز اور کیپٹن صفدر کی استثنا کی درخواست مسترد کردی۔

تفصیلات کے مطابق شریف خاندان کوایک اورجھٹکا ، احتساب عدالت نے نوازشریف ،مریم نواز اورکیپٹن صفدرکی عدالت میں حاضری سے استثنیٰ کی درخواست مسترد کردی۔ شریف خاندان کے وکیل نے عدالت سے استدعا کی کہ نواز شریف کی اہلیہ بیمار ہیں ان کی تیمارداری کے لیے لندن جانا ہےشریف فیملی نے عدالت میں حاضری سے 2ہفتے کااستثنیٰ مانگا تھا۔ شریف خاندان کےخلاف احتساب عدالت میں پاناما ریفرنسز کیس کی سماعت ہوئی۔نوازشریف ، مریم نواز اور کیپٹن صفدر عدالت میں پیش ہوئے۔ احتساب عدالت کےجج محمد بشیر نے شریف خاندان کےخلاف چار گواہوں پی آئی ڈی کے ڈائریکٹر مبشر توقیر،وقاص احمد، ڈپٹی ڈائریکٹرز نیب لاہور زاور منظور اورسلطان نذیر کے بیانات ریکارڈ کیے۔ شریف خاندان کے وکیل خواجہ حارث نے بیانات پر جرع بھی کی۔

واضح رہے کہ سماعت کے دوران نیب کی جانب سےفلیگ شپ اور العزیزیہ کے ضمنی ریفرنسز کی نقول نوازشریف اور ان کے وکیل خواجہ حارث کو فراہم کردی گئیں۔ خواجہ حارث نے نئے ضمنی ریفرنسز پر بحث کیلئے عدالت سے مزید وقت مانگ لیا۔