رابطہ کمیٹی نے ایم کیوایم چھوڑنے والوں کے خلاف بڑا فیصلہ کرلیا

رابطہ کمیٹی نے ایم کیوایم چھوڑنے والوں کے خلاف بڑا فیصلہ کرلیا


کراچی(24نیوز) رابطہ کمیٹی ایم کیوایم چھوڑنے والوں کے خلاف متحرک ہوگئی۔ خالد مقبول صدیقی نے فریق بننے کیلئے الیکشن کمیشن میں درخواست دیدی۔ الیکشن کمیشن نے فاروق ستار سے5مارچ تک جواب طلب کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق چیف الیکشن کمشنر کی سربراہی میں تین رکنی کمیشن نے ڈپٹی میئر کراچی ارشد ووہرا اور ایم کیو ایم پاکستان کے 12 منحرف ارکان قومی و صوبائی کی نااہلی سے متلعق درخواستوں پر سماعت کی۔

الیکشن کمیشن نے دونوں درخواستوں کو یکجا کر دیا۔ سینیٹر بیرسٹر محمد سیف نے خلاف مقبول صدیقی کی طرف سے درخواست دائر کی اور کہا کہ ایم کیو ایم کی رابطہ کمیٹی نے فاروق ستار کی جگہ خالد قبول صدیقی کو نیا کنوینیئر بنایا ہے۔

 اس لیے فاروق ستار کی جگہ پٹیشنر خالد مقبول صدیقی کو بنایا جائے ۔اس پر ایس اے اقبال قادری نے اعتراض اٹھاتے ہوئے کہا کہ ڈاکٹر فاروق ستار ہی ایم کیو ایم کے کنوینیئر ہیں۔

بیرسٹر سیف نے دلائل میں مزید کہا کہ ڈر ہے فاروق ستار ارشد ووہرا کے خلاف درخواست واپس لے لیں گے اس لیے خالد مقبول صدیقی کو درخواستگزار بننے کی ہماری پٹیشن منظور کی جائے۔

جس پر چیف الیکشن کمشنر نے کہا اگر آپ کی درخواست منظور کرلو تو اس کا مطلب ہو گا فاروق ستار کی کنوینیئر شپ کے خلاف فیصلہ دے دیا۔

الیکشن کمیشن نے دونوں درخواستوں کی سماعت پانچ مارچ تک ملتوی کرتے ہوئے فاروق ستار کو طلب کر لیا۔ بعدازاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ایم کیو ایم کی منحرف رکن ارم عظیم فاروق نے دعویٰ کیا کہ ایم کیو ایم لندن بہادرآباد گروپ کو سپورٹ کر رہی ہے۔