ورلڈکپ فائنل انتہائی سنسنی خیزاور یادگارمیچ بن گیا

ورلڈکپ فائنل انتہائی سنسنی خیزاور یادگارمیچ بن گیا


لارڈز(24 نیوز) انگلینڈ اورنیوزی لینڈ کا فائنل کرکٹ تاریخ کا انتہائی سنسنی خیز اوریادگارترین میچ بن گیا، تاریخ میں پہلی بارورلڈچیمپئن کا فیصلہ رنز اوروکٹوں کے بجائے باؤنڈریز پرہوا.

انگلینڈاورنیوزی لینڈ کے درمیان ورلڈ کپ فائنل دھڑکنیں روک دینے والا میچ ثابت ہوا۔ سنسنی سے بھرپور فائنل کا فیصلہ سپر اوور میں رنز اوروکٹوں کے بجائے باؤنڈریزکی تعداد پرجاکرہوا۔ دونوں اننگز 241،241رنز پرٹائی ہوئیں توبات سپراوور پر آگئی۔ سپراوور بھی سنسنی سے خالی ثابت نہ ہوا،،انگلینڈ نے پہلے کھیلتے ہوئے دوچوکوں کی مدد سے نیوزی لینڈ کو16رنز کا ہدف دیا۔

نیوزی لینڈجیمز نیشم کے شاندار چھکے کی مدد سے ہدف کے قریب پہنچ گیا، نیوزی لینڈ کوآخری گیند پرفتح کے لیے صرف دو رنز درکار تھےڈبل اسکورلینے کی کوشش میں مارٹن گپتل رن آؤٹ ہوگئے اوریوں سپراووربھی 15،15رنز کیساتھ ٹائی ہوگیا لیکن سپراووربھی ٹائی ہونے کے باوجودانگلش کھلاڑیوں نے مارٹن گپتل کے رن آؤٹ ہونے کیساتھ ہی فتح کا جشن شروع کردیا کیونکہ انگلینڈمیچ میں نیوزی لینڈسے زیادہ باؤنڈریز لگانے کی صورت میں میچ میں فتح سمیٹ چکی تھی۔

تاریخ میں پہلی بارورلڈچیمپئن کا فیصلہ باؤنڈریز کی تعداد پرہوا، انگلینڈ نے سپراوورسمیت میچ میں 26باؤنڈریاں لگائیں جبکہ نیوزی لینڈ17باؤنڈریاں لگانے میں کامیاب رہا۔ سنسنی سے بھرپور ورلڈکپ کا یہ فائنل میچ شائقین کو مدتوں یاد رہے گا۔