زمبابوے میں فوج نے حکومت کا تختہ الٹ دیا

ہرارے (24نیوز) افریقی ملک زمبابوے کے صدر رابرٹ موگابے کا تختہ الٹ کر فوج نے اقتدار سنبھالنے کی اطلاعات ہیں تاہم فوجی حکام کی طرف سے اقتدار پر قبضے کی تردید بھی کی جارہی ہے اور فوج نے سرکاری ٹی وی پر خطاب کرتے ہوئے اعلان بھی کیا کہ صدر موگابے محفوظ ہیں۔

زمبابوے میں فوج نے حکومت کا تختہ الٹ دیا
Zimbabwe-Gov


تفصیلات کے مطابق امریکی میڈیا کا کہنا تھا کہ زمبابوے میں 37 سال بعد صدر موگابے کا تختہ الٹ دیا گیا ہے ، 93 سالہ حکمران کی رہائش گاہ کے قریب دھماکا بھی سنا گیا ہے،حکومت کے ساتھ رسہ کشی کے بعد فوجی ٹینک اور ٹرک دارالحکومت کے قریب کل سے جمع ہیں، فوج نے سرکاری ٹی وی کے ہیڈ کوارٹرز کا کنٹرول سنبھال لیا جبکہ شام کی خبریں نشر نہیں کی گئیں۔

سرکاری ٹی وی اس وقت فوج کے قبضے میں ہے اورفوج نے یہ بیان بھی جاری کیا ہے کہ اقتدار پر قبضہ نہیں کیا گیا اور 93سالہ صدر محفوظ ہیں،زمبابوے کی تازہ صورتحال کے پیش نظر امریکا نے اپنے شہریوں کو محتاط رہنے کی ہدایت کی ہے جبکہ برطانیہ نے اپنے شہریوں کو صورتحال واضح ہونے تک گھروں میں رہنے کا کہا ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق سیاسی بحران صدر موگابے کی جانب سے نائب صدر کی برطرفی کے بعد بڑھا،فوج کے سربراہ چی وینگا نے فوجی مداخلت کی دھمکی دی تھی اور کہا تھا کہ انقلاب کے دفاع کےلیے ضرورت پڑی تو میدان میں آئیں گے۔