نواز شریف، مریم نواز، کیپٹن (ر) صفدر کی احتساب عدالت میں پیشی

نواز شریف، مریم نواز، کیپٹن (ر) صفدر کی احتساب عدالت میں پیشی

اسلام آباد(24نیوز) شریف خاندان کی نیب ریفرنسز میں پیشیوں کا سلسلہ جاری ہے، نواز شریف، مریم نواز اور کیپٹن صفدر آج بھی احتساب عدالت میں پیش ہوئے، ایس ای سی پی کی افسر سدرہ منصور نے اپنا بیان رکارڈ کرا دیا، مریم نواز نے آئندہ سماعت پر حاضری سے استثنیٰ کی درخواست کر دی۔


تفصیلات کے مطابق نیب ریفرنسز میں سابق وزیر اعظم کی آج ساتویں پیشی ، مریم نواز اور ان کے داماد کیپٹن صفدر بھی ہمراہ تھے، کیس کی سماعت احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے کی۔

حدیبیہ پیپر ملز کا رکارڈ اور آڈٹ رپورٹ عدالت میں پیش کئے گئے، مریم نواز نے آئندہ سماعت پر حاضری سے استثنیٰ کی درخواست بھی دائر کر دی۔

سماعت کے دوران ایس ای سی پی کی افسر سدرہ منصور نے بیان رکارڈ کرایا، سدرہ منصورنے عدالت کو بتایا کہ وہ 3 اگست کو نیب کی تفتیشی ٹیم کے سامنے پیش ہوئیں، تفتیشی افسر کو متعلقہ دستاویزات کی سربمہر نقول فراہم کیں، خواجہ حارث نے جرح میں سوال کیا کہ کیا دستاویزات مہر موجود تھی، سدرہ منصور نے جواب میں کہاکہ ان پر مہر نہیں تھی، خواجہ حارث نے پھر سوال کیا کہ کیا انہوں نے اس بارے تفتیشی افسر کو بتایا سدرہ منصور نے کہا کہ تفتیشی کو انہوں نےنہیں بتایا۔

کمرہ عدالت میں نواز شریف نے میڈ یا سے غیر رسمی گفتگو بھی کی، عمران خان کو ضمانت ملنے کے سوال پر نواز شریف نے کہا کہ دہرے معیار کے خاتمے کے لئے جدو جہد جاری رہے گی،نواز شریف کا کہنا تھا کہ وہ اپنی جدو جہد منطقی انجام تک پہنچا کر ہی دم لیں گے۔