پسند کی شادی کرنیوالے جوڑے کے رشتہ دار ملیر کورٹ میں لڑ پڑے


(24 نیوز): کراچی ملیر کورٹ میں پسند کی شادی کرنیوالے لڑکا لڑکی کے والدین، عزیزواقارب آپس میں لڑ پڑے۔ مارا ماری کے دوران عدالت کی عمارت کے شیشے توڑ دیئے، پولیس نے 3 افراد کو گرفتار کر لیا۔

تفصیلات کے مطابق کیس کی سماعت کے لئے دونوں خاندان کورٹ پہنچے تو سماعت میں کچھ وقت باقی تھا کہ آپس میں تلخ کلامی ہو گئی اور بات توڑ پھوڑ مارا ماری تک جا پہنچی، ہنگامے کے باعث کمرہ عدالت کے شیشے بھی ٹوٹ گئے۔ پولیس نے موقع سے تین افراد کو گرفتار کیا جبکہ عدالت نے ملوث افراد کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم دے دیا۔

 

 واضح رہے کہ پسند کی شادی کرنے والی لڑکی کے والد نے کراچی کی ملیر کورٹ میں درخواست دائر کر رکھی تھی، درخواست میں موقف اپنایا گیا تھا کہ غلام شبیر، شاداب سجاد اور دیگر افراد نے اسکی بیٹی کو یرغمال بنایا ہوا ہے۔