حمزہ شہباز شریف سکیورٹی سٹاف سے الجھ پڑے


لاہور( 24نیوز ) اپوزیشن لیڈرحمزہ شہباز پنجاب اسمبلی کے سکیورٹی اسٹاف پر برہم ہو گئے ،  میرے اسٹاف کو اسمبلی میں داخل ہونے سے روکا گیا.

تفصیلات کے مطابق اپوزیشن لیڈر حمزہ شہباز شریف  پنجاب اسمبلی میں سینیٹ کی دو خالی ہو نے والی نشستوں پر ہونےوالےضمنی انتخاب کے سلسلے میں اسٹاف کے ساتھ اسمبلی میں داخل ہونے لگے تو وہاں موجود سیکورٹی اہلکاروں نے ان کے سٹاف کو اند ر جانے سے روک لیاجس پر اپوزیشن لیڈر حمزہ شہباز طیش میں آگئے، حمزہ شہباز شریف کا کہنا تھا کہ میرے اسٹاف کو اسمبلی میں داخل ہونے سے روکا گیا۔

اسمبلی سیکرٹریٹ اسٹاف کا رویہ افسوسناک ہے،ہمارے ارکان اسمبلی کو دھکے دئیے جا رہے ہیں، انہوں نے سکیورٹی اہلکاروں  سے کہنا تھا کہ آپ ہمارے ارکان اسمبلی کو روک رہے ہیں ، کیا اسپیکر اسمبلی کے کہنے پر روکا جارہا ہے، یہ اسمبلی ہے کوئی تھانہ نہیں  کوئی خدا کا خوف کریں  یہ اچھی بات نہیں ہے چھوڑیں یہ ہمارے ایم پی ایز ہیں۔  

دوسری جانب وزیر اطلاعات و ثقافت فیاض الحسن چوہان کا رد عمل بھی سامنے آیا ان کا کہنا تھا کہ ن لیگ اپنی عادت سے مجبور ہے وہ جھوٹ بولتی ہے اتنا کہ سچ لگنے لگے، سکیورٹی اہلکار کسی ممبر اسمبلی کو نہیں روک سکتے، حمزہ شہباز شریف کے ساتھ آنے والےجن لوگوں کو روکا گیا ان کا نام لسٹ میں نہیں تھا،  پنجاب اسمبلی میں داخلے کے لئے چھ مہمانوں کا نام درج تھاجبکہ حمزہ شہباز بارہ مہمانوں کو ساتھ لے آئے جن افراد کے نام لسٹ میں تھے ان کو نہیں روکا گیا۔