بھاشا ڈیم کی لاگت میں مزید اضافہ

بھاشا ڈیم کی لاگت میں مزید اضافہ


24نیوز: پاکستانی روپے کی قدر میں مسلسل کمی کے باعث بھاشا ڈیم کی لاگت بھی 126 ارب روپے بڑھ گئی،  ڈیم فنڈ میں ابھی تک 5 ارب روپے بھی پورے نہیں ہو سکے۔

پاکستان تحریک انصاف کی حکومت کے دور میں روپے کی قدر میں مسلسل کمی سے عوام کو مہنگائی کا عذاب تو بھگتنا پڑ ہی رہا ہے،  اس سے دیامر بھاشا ڈیم کی لاگت میں بھی 126 ارب روپے سے زیادہ کا اضافہ ہو گیا ہے۔ گزشتہ چند ہفتوں کے دوران ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قدر میں کمی کے باعث اب تک ڈالر 9 روپے مہنگا ہو چکا ہے،  2013 میں بھاشا ڈیم پر لاگت کا تخمینہ 14 ارب ڈالر لگایا گیا تھا۔  اگست 2018 میں ڈالر کے ریٹ کے مطابق پاکستانی روپے میں لاگت کا تخمینہ 17 کھرب 39 ارب روپے بنتا تھا  لیکن اس کے بعد روپے کی قدر میں کمی سے ڈالر 124 روپے 25 پیسے سے مہنگا ہو کر 133 روپے 25 پیسے کا ہو گیا، جس کے حساب سے اب بھاشا ڈیم کی تعمیر کے لیے 18 کھرب 65 ارب روپے سے بھی زیادہ کی رقم چاہیے۔

دوسری طرف وزیر اعظم چیف جسٹس ڈیم فنڈ میں اسٹیٹ بینک کے مطابق اب تک مجموعی طور پر 4 ارب 94 کروڑ روپے ہی اکٹھا ہو سکے ہیں، روپے کی قدر میں مزید کمی نہ ہونے کی صورت میں بھی ڈیم کی صرف اضافی لاگت پوری کرنے کے لیے اس سے 26 گنا زیادہ رقم چاہیے۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔