قوم کا ایک اور بیٹا وطن پر قربان



راولپنڈی(24 نیوز)قوم کا ایک اور بیٹا فرض کی ادائیگی کے دوران وطن پر قربان ہوگیا، کنٹرول لائن پر بھارتی فائرنگ سے سپاہی محمد شیراز شہید ہوگیا، دو روز میں کنٹرول لائن پر پاک فوج کے شہید جوانوں کی تعداد 4ہوگئی، بھارت کے ڈپٹی ہائی کمشنر کو دفتر خارجہ طلب کرکے احتجاج ریکارڈ کرا دیا گیا۔

بھارت مقبوضہ کشمیر میں اپنی سیاہ کاریاں چھپانے کیلئے کوشاں،، کنٹرول لائن کا محاذ کھول دیا،، تین روز سے سیزفائر کی خلاف ورزیاں جاری۔آئی ایس پی آر کے مطابق سپاہی محمد شیراز نے وطن کی مٹی پر جان نچھاور کر دی۔ سپاہی محمد شیراز نے لائن آف کنٹرول کے بٹل سیکٹر میں جام شہادت نوش کیا۔

بھارتی فوج کی فائرنگ سے گزشتہ روز بھی نائیک تنویر، لانس نائیک تیمور اور سپاہی رمضان شہید ہوگئے تھے۔آئی ایس پی آر کے مطابق پاک فوج کی جوابی فائرنگ سے 5 بھارتی سپاہی ہلاک اور متعدد زخمی ہو گئےجبکہ دشمن کے کئی مورچے بھی تباہ کر دیئے گئے، فائرنگ کا تبادلہ اب بھی وقفے وقفے سے جاری ہے۔

گزشتہ روز شہید ہونے والے 37 سالہ نائیک تنویر کا تعلق خانیوال سے تھا،اور اس کا ایک بیٹا اور 2 بیٹیاں ہیں، لاہور کا 26 سالہ لانس نائیک ایک بیٹی کا باپ تھا،شہید 20 سالہ سپاہی رمضان بھی خانیوال کا رہائشی تھا۔

بلااشتعال فائرنگ پر بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنرکو طلب کرکے شدید احتجا ج ریکارڈ کرادیا گیا، دفتر خارجہ کی طرف سے کہا گیا کہ جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزی سے علاقے امن کو خطرہ ہے، بھارت سیزفائر معاہدے کی پاسداری کرے۔

اظہر تھراج

Senior Content Writer