پلوامہ حملہ،بھارتی حکومت کابھانڈا پھوٹ گیا

پلوامہ حملہ،بھارتی حکومت کابھانڈا پھوٹ گیا


سرینگر(24نیوز) پلوامہ حملے کے بعد پاکستان پرالزام تراشی کا بھارتی پروپیگنڈا حملہ کرنے والے نوجوان کے والدین نے ناکام بنادیا، عادل ڈار کے والد غلام حسن ڈار کہتے ہیں جو تکلیف بھارتی فوجیوں کے اہلخانہ سہ رہے ہیں ہم بھی ایسی تکلیف سہتے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان پر بے بنیاد الزام لگانے والی بھارتی حکومت کا مکروہ چہر ہ کھل کرسامنے آگیا، پلوامہ حملےکے بعد عادل ڈار کے والدغلام حسن ڈار نے پاکستان پر الزام لگانے والی بھارتی حکومت کے پروپیگنڈا کو ناکام بنایا،ان کا کہناتھاکہ ہم بھی ایسی ہی تکلیف سہتے ہیں، عادل ڈار کو 2016 میں قابض فوجیوں نے سکول سے واپسی پر روکاتشدد کیا اُس سے ناک زمین پر رگڑوائی تھی، جس کا اس نے بدلہ لیا،عادل کی ماں فہمیدہ کا کہنا ہے بھارتی فوجیوں کے تشدد کے بعد عادل ایسے انتہائی قدم پر مجبور ہوا۔

واضح رہے کہ خود کش حملہ آور کی شناخت عادل احمد ڈار ولد غلام حسن ڈار عرف وقاص کمانڈو ساکن گنڈی باغ کاکہ پورہ پلوامہ کے بطور ہوئی ہے،جیش محمد نے حملے کی ذمہ داری لینے کے دوران کہا کہ یہ حملہ عادل احمد نے انجام دیا جو کہ گنڈی باغ کاکہ پورہ پلوامہ کا رہنے والا ہے۔

سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ویڈیو میں واقعہ سے ایک دن قبل عادل احمد ڈار کاکہناتھاکہ میں نے ایک سال پہلےجیش محمدﷺ کے فدائی سکواڈ میں شمیولت اختیار کی تھی،اور آج وہ دن آ پہنچا جس کی مجھے حسرت تھی، مجھے یہ امید ہے جب تک میرا یہ پیغام آپ لوگوں تک پہنچے گا میں رب کی جنتوں کےمزےلوٹ رہاہوں گا۔ 

گزشتہ روزحملہ سینٹرل ریزرو پولیس فورس کی بس پر کار بم دھماکا ضلع پلوامہ میں سری نگر جموں ہائی وے پر لٹھ پورا کے مقام پر ہوا، دھماکے میں 45 سی آر پی ایف اہلکار ہلاک اور کئی زخمی ہوئے۔

M.SAJID KHAN

CONTENT WRITER