حسین حقانی کی عیاشی کے دن ختم،ایف آئی اے نے بڑا قدم اٹھا لیا


اسلام آباد(24نیوز) میمو گیٹ کے مرکزی ملزم اور امریکہ میں پاکستان کے سابقہ سفیر کے گرد گھیرا تنگ ہونے لگا ہے،ایف آئی اے نے حسین حقانی اور اس کے خاندان کی مکمل تفصیلات بھی حاصل کرلیں۔
تفصیلات کے مطابق حسین حقانی کے اثاثوں کی تفصیلات جاننے کے لئے سیکریٹری خزانہ کو بھی خط لکھ دیا گیا ، میمو گیٹ کے مرکزی کردار حسین حقانی کی وطن واپسی کے لئے ایف آئی اے نے نادرا سے ریکارڈ حاصل کر لیاوایف آئی اے نے حسین حقانی اور اس کے خاندان کی مکمل تفصیلات بھی حاصل کرلی ہے۔۔جبکہ اثاثوں کی تفصیلات کےلئے سیکریٹری خزانہ کو خط بھی لکھ دیا ہے۔
ذرائع کا کہنا ہے کہ ایف آئی اے نے خزانہ حکام سے حسین حقانی کے بنک اکاونٹس اور امریکہ میں پاکستانی سفارت خانے کو رقم منتقل کرنے کی تفصیلات مانگی ہیں، حسین حقانی کی واپسی اور اسکی موجودگی کا پتا چلانا کے لئے ایف آئی اے دفتر خارجہ سے بھی رابطہ کیا تھا۔

یہ بھی پڑھئے:ماہرہ خان کونسی جادو کی چھڑی لے کر ایشین فلم فیسٹیول ایوارڈ شومیں شریک ہوئیں؟
ذرائع کے مطابق حسین حقانی کے خلاف ملنے والے تمام معلومات سے انٹر پول کو آگاہ کیا جائے گا۔
دوسری جانب خط میں کہا گیا ہے کہ حسین حقانی پاکستانی عدلیہ کو حساس مقدمے میں مطلوب ہیں اور وہ عدلیہ کو واپس آنے کی یقین دہانی کیلئے ایک جھوٹا حلف نامے جمع کرا کے امریکا روانہ ہوئے تھے تاہم کئی بار طلبی کے باوجود عدالت میں حاضر نہیں ہوئے ہیں اس لیے حسین حقانی کو گرفتار کرکے پاکستان واپس لانے کیلئے ریڈ وارنٹ جاری کئے جائیں۔
میمو گیٹ اسکینڈل کیس کی 15 فروری کو سپریم کورٹ میں ہونے والی سماعت میں چیف جسٹس ثاقب نثار نے ڈائریکٹر ایف آئی اے بشیر میمن کو سابق سفیر حسین حقانی کو وطن واپس لانے کے لیے اقدامات کرنے کا حکم دیا تھا جس پر ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے عدالت کو بتایا کہ حسین حقانی کو وطن واپس لانے کیلئے ضروری کارروائی کو حتمی شکل دے دی گئی ہے اور وزرات داخلہ سے منظوری کے بعد ایف ائی اے انٹرپول کو ریڈ وارنٹ جاری کرنے کیلئے خط لکھے گئی جس کے ساتھ ہی انٹر پول کے ذریعے حسین حقانی کی واپسی کیلئے راست قدم اٹھائے جائیں گے۔

اظہر تھراج

صحافی اور کالم نگار ہیں،مختلف اخبارات ،ٹی وی چینلز میں کام کا وسیع تجربہ رکھتے ہیں