بھارتی فوجی مودی سرکار کیخلاف پھٹ پڑا


نئی دہلی(24نیوز)مودی سرکارکاجنگی جنون ہےکہ ختم ہونےکانام نہیں لےرہا،لیکن بھارتی فوج کےاہلکاروں کاکوئی پرسان حال نہیں ہے، بھارتی فوجی اہلکارمودی سرکار کیخلاف پھٹ پڑا۔

تفصیلات کے مطابق الیکشن میں کامیابی کے لئے مودی سرکاری بھارتی فوج کو مروانے پر تلی ہوئی ہے، پلوامہ حملہ میں بھی مودی سرکار ملوث نکلی جبکہ من گھڑت کہانیاں بناکر الزام پاکستان پر لگانے کی کوشش کی جارہی تھی،جس کی تردید عالمی برادری کے فورم پر بھی کردی گئی ، مودی سرکاری اپنی کارستانیوں سے الیکشن میں کامیابی حاصل کرنے کے لئے نئے نئے حربے استعمال کررہی ہے، مگر بھارتی فوج مودی کی ان احمقانہ پالیسیوں سے تنگ آچکی ہے۔

بھارتی فوجی بنیادی سہولیات سے محروم ہوکررہ گئے،ایک بھارتی فوجی نے اپنی بے بسی کارونا روتے ہوئے کہاکہ میرے" پیتا جی29سال نوکری کرکے گھرآئے مگر بڑی بےدردی سے ان کوقتل کردیاگیا قاتلوں میں چھ لوگ شامل تھے دو کو گرفتار کیاگیا" پولیس نے رشوت لے کرکیس کو بند کردیا،میرے پاس ٹھوس ثبوت بھی موجود ہیں،مجھے دھمکیاں مل رہیں ہیں کہ خاموش رہونہیں تو وردی اُتروادی جائے گی۔

بھارتی فوجی کاکہناتھاکہ کسی منتری،وزیراعظم اور نہ کسی سیاسی شخصیت نے میری بات تک نہیں سنی،مودی سرکاری مجھے انصاف چاہیے نہیں تومیں اپنے خاندان کے ساتھ خودکشی کرلوں گا۔