مسلمان بچے نے آسٹریلوی سینیٹر کے سر پر انڈا دے مارا



کینبر(24نیوز)  آسٹریلوی سینیٹر فارسٹرایننگ مسلمانوں کے خلاف بے بنیاد بیان دے رہا تھا،جس پر مسلمان بچے نے اس کے سر پر انڈا دے مارا۔

تفصیلات کے مطابق ایک تقریب میں آسٹریلوی سینیٹر مسلمانوں کے خلاف زہر اگل رہا تھا کہ اسی دوران مسلمان بچے نے اس کے سر پر انڈا دے مارا، آسٹریلوی سینیٹر نے نیوزی لینڈ میں ہونے والے واقعہ کو بھی مسلمانوں  پر ڈال دیا جس کا جواب اس کو اُسی وقت مسلمان بچے نے دے دیا۔

ذرائع کاکہناتھاکہ تقریب شروع ہوئی تو آسٹریلوی سینیٹر مسلمانوں کے خلاف  اشتعال انگیز تقریر کرنے لگ گیا جس پر نوجوان نے اس کے سر پر انڈا دے مارا،جواب میں آسٹریلوی سینیٹر نے بچے کو تھپڑ مارے اور تشدد کا نشانہ بھی بنایا،علاوہ ازیں سکیورٹی پر مامور اہلکاروں نے بھی بچے کوزدو کوب کیا گیا۔