دنیا بھر میں آج برداشت کا عالمی دن منایا جارہا ہے

اسلام آباد (24نیوز)دنیا میں بڑھتے ہوئے مسائل کے باعث لوگوں میں عدم برداشت بھی بڑھتی جارہی ہے، عدم برداشت سے معاشرے میں تنازعات اور جھگڑے بھی بڑھ رہے ہیں، اسی بارے میں آگاہی کے لئے ہرسال عالمی سطح پر برداشت اور رواداری کا عالمی دن منایا جاتا ہے۔


تفصیلات کے مطابق دنیا میں بڑھتے ہوئے مسائل نے انسانوں میں برداشت اور رواداری کا مادہ ختم کر دیا ہے، یہی وجہ ہے کہ ذرا ذرا سی بات پر لوگ آپس میں لڑنے جھگڑنے لگتے ہیں، نوبت خودکشی اور قتل تک بھی جاپہنچتی ہے۔

ماہر نفسیات ڈاکٹر سدرہ اختر چودھری نے معاشرے میں عدم برداشت کی وجوہات کا ذکر کرتے ہوئے بتایا کہ مسائل میں اضافے سے لوگوں میں چڑچڑا بن بڑھتا جارہا ہے، جس سے انسانی جسم اور ذہن پر منفی اثرات مرتب ہوتے ہیں۔

ڈاکٹر سدرہ نے بتایا کہ اگر کوئی شخص گھر سے ہی جھگڑ کرنکلے گا تو باہر بھی اس کا رویہ خوشگوار نہیں ہوگا، اسی لئے والدین اور اساتذہ کو چاہئے کہ بچوں کو برداشت اور رواداری کی تربیت دیں۔

گھریلو جھگڑوں سے پیدا ہونے مسائل کے بارے میں ڈاکٹر سدرہ کا کہنا تھا کہ ہر شخص کو چاہئے کہ وہ خود کو دوسرے کی جگہ پر رکھ کر سوچے، کہ اگر اس کی جگہ وہ خود ہوتا تو کیا کرتا، ان مسائل پر قابو پانے کا سب سے بہترین حل یہ ہے کہ لوگوں کے منفی روئیے کو نظر انداز کیا جائے۔