ننھے سائنس دان شہیر نیازی کا ایک اور اعزاز

ننھے سائنس دان شہیر نیازی کا ایک اور اعزاز


لاہور (24 نیوز)  ننھے سائنس دان محمد شہیر نیازی کا تحقیق پر مبنی مضمون رائل سوسائٹی اوپن سائنس جنرل میں شائع،  وہ پاکستان کے لیے فزکس میں ایک اور نوبیل پرائز لانے کے خواہش مند ہیں۔

لاہور کے رہائشی محمد شہیر نیازی کی عمر صرف 17 سال ہے اور وہ پاکستان کے لیے فزکس میں ایک اور نوبیل پرائز لانے کے خواہش مند ہیں۔ان کا برقی چھتوں یعنی ’الیکٹرک ہنی کوم‘ پر کی گئی تحقیق پر مبنی مضمون، رائل سوسائٹی اوپن سائنس جنرل نے شائع کیا گیا ہے، اپنے سائنسی تحقیقی مضمون سے انھوں نے دورِ حاضر کے عالمِ طبعیات کو نہ صرف حیران کیا بلکہ تحقیق کے لیے ایک نیا زاویہ فراہم بھی کیا ہے،یہ جریدہ دنیا بھر سے سائنس، ریاضی اور انجینیئرنگ کے میدان میں ہونے والی تحقیقات شائع کرتا ہے۔

برطانوی نشریاتی ادارے سے بات کرتے ہوئے اے لیول کے طالبِ علم شہیر نیازی نے فخر سے بتایا کہ کم عمری میں سائنسی تحقیق شائع کرنے کے اعتبار سے انھوں نے ماضی کے مشہور سائنسدان اور ماہرِ طبعیات آئزک نیوٹن کو پیچھے چھوڑ دیا ہے، نیوٹن کا پہلا تحقیقاتی مضمون بھی اسی رسالے میں شائع ہوا تھا، اس وقت ان کی عمر 17 برس تھی۔ جب میرا مضمون گذشتہ ماہ شائع ہوا تو تب میں 16 برس کا تھا.