سمندر پار پاکستانیوں کو ووٹ کا حق مل گیا


اسلام آباد( 24نیوز ) سپریم کورٹ نے سمندر پار پاکستانیوں کو خوشخبری سنادی ،ضمنی انتخابات میں ووٹ ڈالنے کی اجازت دیدی،الیکشن کمیشن کو ای ووٹنگ کا انتظام کرنے کا حکم دے دیا۔
چیف جسٹس سپریم کورٹ جسٹس میاں ثاقب نثار نے لاہور رجسٹری میں کیس کی سماعت کے دوران ریمارکس دیتے ہوئے کہا ہے کہ انتخابی نتائج کی درستی سے متعلق تمام نتائج پارلیمنٹ کے سامنے رکھے جائیں،تجرباتی نفاذ کا مقصد یہ نہیں کہ اس کے نتائج کو نظر انداز کر دیا جائے۔

 یہ بھی پڑھیں:  پاکستان کا وزیر اعظم کون؟ فیصلہ آج ہوگا
انہوں نے کہا کہ نادرا پائلٹ پراجیکٹ کےانتخابی عمل کوفول پروف بنانے کیلئے لیکشن کمیشن کی معاونت کرے،پائلٹ پراجیکٹ بنانے پر الیکشن کمیشن اور نادرا کے مشکور ہیں،پائلٹ پراجیکٹ کوالیکشن کمیشن کے قواعداورآپریشن پلان کے تحت مکمل کیاجائے،میکنزم بنائیں اور قانون کےمطابق عملدرآمد کریں۔

 یہ بھی پڑھیں:    ناصر جمشید پر 10سال کیلئے کرکٹ کے دروازے بند

یاد رہے عمران خان اوراوورسیز پاکستانیوں نے ووٹ کے حق کیلئے عدالت سے جوع کررکھا تھا،الیکشن کمیشن نے نادرا کے اشتراک سے اوورسیزپاکستانیوں کے ووٹ ووٹرلسٹوں میں درج کرلیے ہیں۔

ایک اور مقدمے میں ڈی جی ماحولیات نے عدالت کو بتایا کہ بینک گارنٹی کے بغیر اسٹیل ملز نہیں کھولی جارہیں،اسموگ کے خدشے کے پیش نظراسٹیل ملوں کوبند کیاجارہا ہے۔
چیف جسٹس سپریم کورٹ نے اپنے ریمارکس میں کہا کہ بچوں کے بہترمستقبل کیلئے انہیں بہتر ماحول فراہم کریں،خراب ماحول سے شہریوں کی صحت خراب ہورہی ہے،ماحول کی بہتری کامعاملہ ہمارےبچوں کی صحت سے جڑا ہے،سوچ بدل لیں کہ کسی کے لیے یہ کام کرنا ہے،ماحولیات کی بہت کیلئے نظام وضع کیا جائے۔