پشاور:سرکاری اسپتالوں میں ڈاکٹروں کی ہڑتال جاری

پشاور:سرکاری اسپتالوں میں ڈاکٹروں کی ہڑتال جاری


پشاور(24 نیوز) خیبرپختونخواکےسرکاری اسپتالوں میں ڈاکٹروں کی ہڑتال تیسرے روزبھی جاری رہی،علاج و معالجے کیلئے آنے والے مریضوں کودشواری کاسامنا کرناپڑا، صوبائی حکومت نےکل سےاو پی ڈیزکھلوانےکا اعلان کردیا۔

خیبر پختونخوا کے وزیرصحت ہشام انعام اللہ،نوشیروان برکی اورڈاکٹرضیاء الدین کے مابین جھگڑے کا معاملہ تاحال حل نہ ہوسکا، ڈاکٹروں کی تمام بڑے سرکاری اسپتالوں میں ہڑتال تیسرے روز بھی جاری رہی،اوپی ڈیز اوردیگر شعبے بند ہونےسےمریضوں اورتیمارداروں کوسخت کا مشکلات کا سامناکرناپڑا۔ وزیراطلاعات شوکت یوسفزئی کہتے ہیں ہرصورت میں اوپی ڈیز کھلیں گے،کسی نے رخنہ ڈالا تو آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائے گا،احتجاجی ڈاکٹروں کو شوکاز نوٹسز جلد جاری کیے جائیں گے۔

ڈاکٹرزصوبائی وزیرصحت اورنوشیروان برکی کیخلاف کارروائی کےمطالبےپرقائم ہیں،شوکت یوسفزئی کے اعلان پرردعمل میں ڈاکٹرز کونسل کےممبررضوان کنڈی نےکہا کہ شوکت یوسفزئی خودآکراوپی ڈی میں مریضوں کاعلاج کیاکریں۔ صوبائی حکومت اورڈاکٹروں کےدرمیان تنازعہ کےباعث مریض دربدرکی ٹھوکریں کھانے پرمجبورہیں جبکہ بظاہرصوبائی محکمہ صحت سےمعاملات ٹھیک ہوتے نظرنہیں آرہے۔