سعودی حکومت نے گرفتار شہزادوں، بڑے تاجروں کی رہائی پر غور شروع کر دیا


 (24نیوز): اثاثے دو، رہائی لو، سعودی حکومت نے گرفتار شہزادوں اور امراء کو پیشکش کردی۔ سعودی حکومت نے انسداد  کرپشن مہم میں پکڑے گئے. شہزادوں اور بڑے تاجروں کی رہائی پر غور شروع کردیا ہے، تاہم اس کے لئے انہیں اپنے اثاثے حکومت کے حوالے کرنا ہوں گے۔

برطانوی میڈیا نےدعویٰ کیا ہے کہ سعودی حکومت زیرحراست افراد کی اندرون اور بیرون ملک جائیدادوں، بینک کھاتوں اور حصص کا حساب کتاب کر رہی ہے۔ زیرحراست شہزادوں میں کھرب پتی پرنس ولید بن طلال بھی شامل ہیں، میڈیا کےمطابق اقدام کا مقصد تیزی سے خالی ہوتے خزانےکو بھرنابھی ہے۔سعودی شہزادوں کو گزشتہ ہفتے گرفتارکیا گیا تھا۔ وہ اس وقت ریاض کے فائیو اسٹار ہوٹل میں زمین پر گدے بچھا کرسوتے ہیں۔