وزیر اعظم ہاؤس کی 61 گاڑیاں نیلام کر دی گئیں

وزیر اعظم ہاؤس کی 61 گاڑیاں نیلام کر دی گئیں


اسلام آباد(24 نیوز)وزیراعظم کی کفایت شعاری پالیسی، پی ایم سیکریٹریٹ کے زیر استعمال 102 گاڑیوں میں سے 61گاڑیاں نیلام کر دی گئیں،جن سے تقریبا 20 کروڑ روپے حاصل ہوئے۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم ہاوس میں قیمتی سرکاری گاڑیوں کی نیلامی کے پہلے مرحلے میں 34 مقامی گاڑیوں کو نیلام کیا گیا، مہران 2005 ماڈل 2 لاکھ 95 ہزار میں نیلام ہوئی جبکہ اکلوتی ہینو بس 22 لاکھ میں نیلام کی گئی۔دوسرے مرحلہ میں 41 درآمدی گاڑیوں کی نیلامی کی گئی تاہم 16 گاڑیاں جن میں مرسڈیز بینز اور 5000 سی سی کی دو بی ایم ڈبلیو شامل ہیں،  ان کی نیلامی ٹیکس اور ڈیوٹی زیادہ ہونے کے باعث نہیں ہو سکی۔

بولی میں اس وقت دلچسپ صورتحال پیدا ہوئی جب لیکسز جیپ کی نیلامی روک دی گئی جس پر بولی دہندگان نے سخت احتجاج کیا، بولی میں سعودی شہزادے فہد بن سلطان کی جانب سے تحفے میں دی جانے والی 4700 سی سی لیکسز جیپ بھی زیادہ قیمت ہونے کی وجہ سے نیلام نہ ہو سکی۔ ایم کیو ایم کے رہنما خواجہ سہیل نے بم پروف گاڑی کی ساڑھے 9 کروڑ بولی دی جسے کمیٹی نے مسترد کر دیا۔

ایڈمنسٹریٹو وزیر اعظم ہاؤس کے مطابق 102گاڑیوں کی مالیت ایک ارب روپےسے زائدمقرر  کی گئی ہے،61 گاڑیوں کی نیلامی سے تقریباً 20 کروڑ روپے حاصل ہوئے ، جبکہ جن گاڑیوں کی بولی نہیں لگی ایف بی آران کی قیمتوں کا دوبارہ تعین کرے گا جس کےبعد گاڑیاں  نیلامی کیلئے پیش کی جائیں گی۔

 

وقار نیازی

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔