طالبہ نمرتا کا قتل یا خودکشی؟ متضاد بیانات ، معاملہ الجھ گیا

طالبہ نمرتا کا قتل یا خودکشی؟ متضاد بیانات ، معاملہ الجھ گیا


لاڑکانہ (24نیوز) لاڑکانہ کے بی بی آصفہ بھٹو ڈینٹل کالج کے ہاسٹل سے فائنل ائیر کی طالبہ نمرتا کماری کی لاش برآمد ہونے کے معاملے پر آر پی او سکھر کی جانب جی آئی ٹی رپورٹ تشکیل دی گئی۔ طالبہ نمرتا کماری کا قتل یا خودکشی پر مختلف متنازعہ بیانات سامنے آرہے ہیں۔

لاڑکانہ کے بی بی آصفہ بھٹو ڈینٹل کالج کے ہاسٹل سے فائنل ائیر کی طالبہ نمرتہ کماری کی لاش برآمد ہونے کے معاملے پر سب کو حیران اور پریشان کردیا ہے ایس پی پی لاڑکانہ مسعود بنگش کے مطابق کے طالبہ نمرتہ کماری کے روم سے لیپ ٹاپ اور موبائل فون اور دیگر چیزیں برآمد کرلی ہیں۔واقعے کے متعلق وائس چانسلر جامعہ بے نظیر بھٹو انیلا عطا رحمان اور پرنسپل بی بی آصفہ بھٹو ڈینٹل کالج کا کہنا ہے کہ واقعے کے متعلق تحقیقاتی ٹیم تشکیل دی گئی ہے تمام تر چیزوں کو دیکھ کر حتمی رپورٹ کو بعد پتہ لگ سکتا ہے کہ نمرتہ کماری کا قتل ہوا یا خودکشی۔

طالبہ نمرتہ کماری کے واقعے کے بعد بی بی آصفہ بھٹو ڈینٹل کالج میں طلبہ و طالبات نے سراپا احتجاج ہیں کلاسز کا بائیکاٹ کرکے احتجاجی مظاہرہ کیا گیا۔ دوسری جانب طالبہ نمرتہ کماری کی پوسٹ مارٹم کے بعد لاش لواحقین کے حوالے کی گئی جہاں پر ورثہ لاش آبائے شہر میرپور ماتھیلو لے گئے۔ واقعے کے بعد پوسٹمارٹم رپورٹ پر چار رکنی ڈاکٹروں کی ٹیم بھی تشکیل دی گئی ہے جب کہ کیمیکل رپورٹ کے لئے نمرتا کماری کے جسم کے دو جز بھی لئے گئے ہیں جنہیں کراچی اور روہڑی لیبارٹری بھیجی گئی ہے واقعے کے متعلق کیمیکل رپورٹ کی رپورٹ کے آنے کے بعد ہی پتہ لگایا جاسکتا ہے کہ خودکشی تھی یا موت۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔