سپریم کورٹ، پشاور ہائیکورٹ کی فاٹا تک توسیع، صدرمملکت نے بل کی منظور دیدی

سپریم کورٹ، پشاور ہائیکورٹ کی فاٹا تک توسیع، صدرمملکت نے بل کی منظور دیدی


اسلام آباد (24نیوز) سپریم کورٹ آف پاکستان اور پشاور ہائی کورٹ کا دائرہ کار فاٹا تک بڑھانے کے لیے کوششیں ثمر بار ثابت ہوئیں۔ صدر مملکت ممنون حسین نے توسیعی بل کی منظوری دے دی ہے۔

24نیوز کے مطابق پاکستان کے صدر ممنون حسین نے سپریم کورٹ اور پشاور ہائیکورٹ کی فاٹا تک توسیع کے بل کی منظوری دی۔ انھوں نے یہ منظور پاکستان کے وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کی سفارش پر دی۔

یہ بھی پڑھیں: آرمی چیف نے فاٹا کو قومی دھارے میں لانے کی حمایت کر دی 

عدالت عظمیٰ اور عدالت عالیہ پشاور کی وفاق کے زیر انتظام علاقوں تک توسیع کا بل فوری طور پر نافذ العمل بھی ہو گیا۔ منظور کے لیے صدر مملکت کے دستخط باقی تھے جو انھوں نے کرتے ہوئے اس کشتی کو کنارے لگا دیا۔

واضح رہے کہ 13 اپریل کو سینیٹ میں سپریم کورٹ اور پشاور ہائیکورٹ کا دائرہ کار فاٹا تک بڑھانے کے لیے منظور کیا گیا تھا۔ جس کی مخالفت کرنے والوں میں پشتونخوا ملی پارٹی اور جے یو آئی (ف) نے کی تھی بلکہ اسمبلی سے بائیکاٹ بھی کیا تھا۔

پڑھنا نہ بھولیں: فاٹا کو کے پی کے میں ضم کیا جائے، شاہد آفریدی 

یہ بھی یاد رہے کہ پاکستان تحریک انصاف اور ن لیگ سمیت دوسری جماعتوں نے بل ان کی غیر موجودگی ہی میں منظور کر لیا تھا جس کی منظور صدر مملکت نے آج اپنے دستخط کرتے ہوئے دے دی۔