کراچی:پولیس مقابلے میں ہلاک مبینہ دہشت گرد نقیب اللہ کی تفصیلات جاری


کراچی (24نیوز) کراچی کے علاقے شاہ لطیف ٹاون میں  پولیس مقابلے میں قتل ہونے والے مبینہ دہشت گرد نقیب اللہ کی تفصیلات جاری کردی گئیں۔

تفصیلات کے مطابق شاہ لطیف ٹاون میں مبینہ پولیس مقابلہ ،مقابلے میں مارے گئے مبینہ دہشت گرد کی تفصیلات جاری ، نقیب اللہ کا اصل نام نسیم اللہ تعلق اور کا لعدم تحریک طالبان سے تھا، نقیب اللہ نے 2007 میں دہشت گردی کی تربیت میران شاہ میں استاد علی سے لی۔

نقیب اللہ نے کراچی میں ساتھیوں کے ساتھ مل کر دو پولیس اہلکاروں کو قتل کیا، کمانڈر شیر محسود کے کہنے پر سپر ہائی وے مچھر کالونی میں ٹی ٹی پی کو منظم کیا، بے نظیر بھٹو کی 18 اکتوبر کی ریلی میں دھماکے کا ماسٹر مائنڈ وہاب کا قریبی ساتھی تھا، 2009 میں پاک فوج سے تعلق کے شبے میں رشتے دار اعجازمحسود کوقتل کیا۔

2009 میں داود محسود کے ساتھ مل کر مکین میں فوجی قافلے پر حملہ کیا،پیپلزپارٹی کے چئیرمین بلاول بھٹو نے مبینہ مقابلے کی تحقیقات کا حکم دے رکھا ہے۔

چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے کراچی میں مبینہ پولیس مقابلے میں مبینہ دہشت گرد نقیب اللہ کے قتل کا نوٹس لیتے ہوئے رپورٹ طلب بھی کر لی۔

مزید دیکھیں اس ویڈیو میں: