ووٹرز کا موڈ تبدیل،بڑی تعداد میں پتنگیں کٹنے کا خدشہ

ووٹرز کا موڈ تبدیل،بڑی تعداد میں پتنگیں کٹنے کا خدشہ


حیدر آباد( 24نیوز )حیدر آباد کے عوام ماضی کے منتخب عوامی نمائندوں سے خاصے مایوس دکھائی دیتے ہیں، یہی وجہ ہے کہ اس بار قومی اسمبلی کے حلقہ این اے دو سو چھبیس کے پختون ووٹرز نے ایم کیو ایم کے امیدواروں کو ووٹ نہ دینے کا فیصلہ کیا ہے۔
رپورٹ کے مطابق دس سال میں کوئی ترقیاتی کام نہ ہوا، حیدرآباد کے حلقہ این اے 226 کے ہزاروں پختون ووٹرز ماضی کے منتخب نمائندوں سے بہت ناراض ہیں۔ کہتے ہیں 1988 سے 2013 تک ایم کیو ایم کو کامیاب کرایا، اس بار انتخابات میں پارٹی اور امیدوار بدلنے کا فیصلہ کیا ہے۔

یہ بھی لازمی پڑھیں۔۔۔ بلاول بھٹو آج شہر اقتدار کی طرف بڑھیں گے
یہاں کے رہنے والے شہریوں نے کہا ہے کہ یہ پٹھان گوٹھ ہے پختونوں کا علاقہ ہے این اے 226 ہے پانچ دس سال سے نظر انداز کیا جارہا،مسلسل فنڈز ملنے کے باوجود ریلوے ٹریک سے متصل اس آبادی کو محفوظ بنانے کیلئے باونڈری تک نہیں بنائی گئی،کچے مکانوں اور خستہ حال سڑکوں پر مشتمل اس آبادی کے ہزاروں افراد کے مسائل حل کرنا تو دور جاننے کی بھی کوشش نہیں کی گئی۔
این اے 226 کے پختون ووٹرز کا کہنا ہے کہ ووٹ کی طاقت سے اسمبلیوں میں جانے والے ناکام ہوں گے، اس الیکشن میں وہ اپنے ووٹ سے دوسری پارٹی کو کامیاب کرائیں گے۔