تربت مقتل گاہ بن گیا، پنجاب کے مزید 5 افراد کی لاشیں برآمد

تربت مقتل گاہ بن گیا، پنجاب کے مزید 5 افراد کی لاشیں برآمد


(24 نیوز): تربت کے علاقے تاجبان سے  پنجاب کے مزید 5 افراد کی لاشیں مل گئیں۔ سیکیورٹی فورسزنےعلاقے میں سرچ آپریشن شروع کر دیا، وزیراعلیٰ شہباز شریف نے واقعہ کی شدید مذمت کی۔

تربت سے پنجاب کے باشندوں کی لاشوں کے اگلنے کا سلسلہ تھم نہ سکا۔ ابھی دو روز قبل ملنے والی پندرہ لاشوں کے زخم تازہ ہی تھے کہ مزید 5 افراد کے تابوت مل گئے۔

لیویز ذرائع کے مطابق جاں بحق ہونیوالےافراد کا تعلق پنجاب سے ہے،3 مقتولین کی شناخت عثمان، دانش اوربدر کے ناموں سے ہوئی جن کا تعلق گجرات سے تھا۔ لاشوں کو ہسپتال منتقل کر دیا گیا۔

ڈپٹی کمشنر کیچ کا کہنا ہےکہ لاشیں مضافاتی علاقے تاجبان سے ملی ہیں۔ پولیس اورسیکورٹی ادارے واقعہ کی تحقیقات کرنے میں مصروف ہیں۔

وزیراعلیٰ شہباز شریف نے واقعہ کی شدید مذمت کی اور غم زدہ خاندانوں سے اظہار تعزیت کرتے ہوئےکہا کہ پانچ افراد کے قتل پر جتنا بھی افسوس کیا جائے کم ہے۔

تربت میں دوسرے صوبوں سے تعلق رکھنے والے باشندوں کے قتل کا یہ نیا واقعہ نہیں پہلے بھی متعدد واقعات ہوچکے ہیں۔