سنجے لیلا بھنسالی اور دپیکا کو زندہ دفن کرنے کی تیاریاں


نئی دہلی (24 نیوز) ہندو انتہا پسندوں نے فلم 'پدماوت' کی ریلیز پر ہدایت کار سنجے لیلا بھنسالی اور اداکارہ دپیکا پڈو کون کو زندہ دفن کرنے کی دھمکی دے دی۔

تفصیلات کے مطابق ہدایت کار سنجے لیلا بھنسالی کی فلم 'پدماوت' شوٹنگ کے وقت سے ہی انتہا پسند ہندؤوں کے نشانہ پر رہی اور دوران شوٹنگ متعدد بار سیٹ پر نہ صرف حملے کیے گئے بلکہ فلم کی شوٹنگ رکوانے کے لیے متعدد رکاوٹیں بھی کھڑی کی گئیں۔

یہ بھی پڑھیں: سعودی عرب میں پہلی مرتبہ پاکستانی فلم " پرچی " کی نمائش

انتہا پسند ہندوؤں نے دھمکی دی کہ وہ فلم ریلیز نہیں ہونے دیں گے جس پر پہلے فلم کا نام بدلا گیا اور اس میں سے کئی سین بھی حذف کردئیے گئے جس کے بعد سپریم کورٹ نے فلم کی پورے بھارت میں ریلیز کی اجازت دے دی۔

مزید پڑھیں: سلمان خان نے کترینہ کیف کا بھائی بننے سے انکار کر دیا

انتہاپسند ہندوؤں نے سپریم کورٹ کے فیصلے کوبھی ماننے سے انکارکر دیا ہے اوراب انہوں نے فلم کے ہدایتکار سنجے لیلا بھنسالی اورہیروئین دپیکا پڈوکون کوجان سے مارنے کی دھمکی دی ہے اور کہا ہے کہ فلم ریلیز ہوئی توانہیں زندہ دفن کردیں گے۔

مبصرین کا کہنا ہے کہ فلم کی ریلیز پرپورے بھارت میں بڑے پیمانے پر فسادات کا خطرہ ہے۔