عمران خان کے کاغذات نامزدگی مسترد

عمران خان کے کاغذات نامزدگی مسترد


اسلام آباد( 24نیوز )عمران خان کے خلاف افتخار چودھری فرنٹ فٹ پر، سیتا وائٹ کیس کا امریکی عدالت کا فیصلہ ریٹرننگ افسر کو پیش، عمران خان کا دستخط کردہ ڈیکلریشن بھی جمع کرایا گیا،قومی اسمبلی کے حلقے این اے 53 سے عمران خان کے بعد سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کے کاغذات نامزدگی بھی مسترد کردیئے گئے،عائشہ گلالئی،سردار مہتاب خان کے بھی کاغذات مسترد.

24نیوزذرائع کے مطابق عمران خان کے خلاف سابق چیف جسٹس افتخار چودھری فرنٹ فٹ پر آ گئے۔ سابق چیف جسٹس نے عمران خان کے کاغذات نامزدگی کے خلاف سیتا وائٹ کیس کا امریکی عدالت کا فیصلہ ریٹرننگ آفیسرکو جمع کرادیا۔ عمران خان کا دستخط شدہ ڈیکلریشن بھی جمع کرایا گیا جس میں انہوں نے ٹیرن وائٹ کی خالہ کو گارڈین مقرر کیا ۔ افتخارچودھری اور عمران خان کے وکلا کے دلائل مکمل ہو گئے۔ 

یہ بھی ضرور پڑھیں:آصف علی زرداری نےانتخابی طبل جنگ بجادیا 

 افتخار چوہدری کا کہنا تھا کہ عمران خان 62 ون ایف کے تحت نااہل ہوتے ہیں۔ وہ نہ صادق ہیں نہ ہی امین ہیں۔ عمران خان کے ٹائرن سیتا وائٹ کے والد ہونے کے دستاویزات ہم نے پیش کیے۔ ان دستاویزات کو کبھی چیلنج نہیں کیا گیا۔ عمران خان کے دستخط شدہ دستاویز ہمارے پاس موجود ہے جس میں انہوں نے ٹیرن وائٹ کی خالہ کو ان کا گارڈین مقرر کیا تھا۔

یہ بھی لازمی پڑھیں:ووٹرز سے متعلق نادرا کا اہم اور حساس ڈیٹا کیسے لیک ہو گیا؟ 

ضرور پڑھیں:غداری سے بچ گئے

 علاوہ ازیں عمران خان اور جمائمہ نے تسلیم کیا تھا کہ کیرولین کو بچی کا گارڈین مقرر کرتے ہیں۔ اگر بچی ہمارے گھر آنا چاہے تو اسے گھر لائیں گے۔ قانون شہادت میں اس کی بہت اہمیت ہے۔ سپیکر کو اس حوالے سے ایک ریفرنس بھیجا گیا تھا۔ اس ریفرنس کا میرٹ پر فیصلہ نہیں ہوا تھا۔ ہماری کوئی ذاتی جنگ نہیں۔ ہم تو یہ سامنے لا رہے ہیں کہ جو شخص مستقبل میں ملک کا وزیراعظم بن سکتا ہے وہ صادق اور امین ہے یا نہیں۔ ہم نے سب کچھ آر او صاحب کے سامنے رکھ دیا اب انہوں نے فیصلہ کرنا ہے۔ خیال رہے کہ قومی اسمبلی کے حلقے این اے 53 سے عمران خان کے کاغذات نامزدگی مسترد  کر دیے گئے ہیں۔