مسلم لیگ ن کا فوج سے خراب تعلقات کا اعتراف

مسلم لیگ ن کا فوج سے خراب تعلقات کا اعتراف


اسلام آباد(24نیوز) مسلم لیگ ن کے قائد کے حالیہ بیان نے واضح کر دیا کہ ن لیگ کے حکومت کے تعلقات فوج سے اچھے نہیں رہے، سول ملٹری تعلقات میں خرابی کی وجہ کیا ہوئی اور اس کے اصل عوامل کیا ہیں یہ معلوم نہیں ہوسکا۔
حکمران جماعت کی قیادت تسلیم کر چکی کہ سول ملٹری تعلقات میں بہتری مستقبل قریب میں بھی ممکن نہیں، پارٹی کے ذمہ داروں کا کہنا ہے کہ تعلقات میں بہتری اسی صورت ممکن ہے، جب سیاست دان عوام کے حالات کی بہتری کیلئے قانون سازی کرے اور اداروں کی کارکردگی پر توجہ نہیں دی جاتی۔

یہ بھی پڑھیں: وزیراعظم کی زیر قیادت "قومی سلامتی کمیٹی" کا اجلاس آج ہوگا 
تحریک انصاف کے رہنماؤں کے مطابق نواز شریف نے اپنی حکومت کے ہر دور میں فوجی جرنیلوں سے محاذ آرائی کی ہے۔
پاکستان پیپلزپارٹی کے مطابق موجودہ حکومت کے فوج سے تعلقات اچھے نہیں رہے اور فوج سے کھلی لڑائی کسی طرح بھی پاکستان کے مفاد میں نہیں
دیکھنا یہ ہے کہ مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف کا حالیہ فوج مخالف بیانیہ ان کی جماعت کا آفیشل موقف بنتا ہے کہ نہیں۔

وقار نیازی

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔