افغانستان، کرکٹ میچ پر راکٹ حملے، 8 افراد جاں بحق ،متعدد زخمی

افغانستان، کرکٹ میچ پر راکٹ حملے، 8 افراد جاں بحق ،متعدد زخمی


جلال آباد( 24نیوز )خوشی غم میں تبدیل،شادیانوں کی جگہ ماتم نے لے لی،چوکے چھکے لگانے والے خون میں لت پت ہوگئے، افغانستان میں کرکٹ میچ کے دوران راکٹ حملے میں منتظم دایت اللہ ظہیر سمیت 8 افراد جاں بحق اور 45 زخمی ہو گئے ہیں۔
عالمی میں میڈیا کے مطابق افغانستان کے شہر جلال آباد میں جاری کرکٹ میچ کے دوران اسٹیڈیم میں موجود شائقین پر پے در پے تین راکٹ داغے گئے جس کے نتیجے میں میچ کے منتظم سمیت دیگر سرکاری حکام جاں بحق ہوگئے ہیں۔ مرنے ولے اور زخمی افراد کو قریبی ہسپتال منتقل کردیا گیا ہے ۔
ننگرہار کے صوبائی گورنر کے ترجمان عطااللہ خوگیانی کا کہنا تھا کہ ننگر ہار صوبے کے دارالحکومت جلال آباد کے ایک اسٹیڈیم میں ’رمضان ٹورنامنٹ کپ‘ جاری تھا جس میں دو مقامی ٹیمیں کے درمیان مقابلہ جاری تھا کہ اچانک یکے بعد دیگرے دھماکوں کی آواز سنائی دی اور ہر طرف دھواں چھا گیا تھا۔ اس واقعے میں 8 افراد ہلاک اور 45 زخمی ہو ئے اور تاحال کسی انتہا پسند جماعت نے ذمہ داری قبول نہیں کی ہے۔

یہ بھی پڑھیں: بیت المقدس میں ناپاک امریکی وجود مسترد

واضح رہے کہ اس سے قبل ستمبر 2017 میں کابل میں ہونے والے ایک کرکٹ میچ کے دوران بھی خود کش دھماکا ہوا تھا جس میں 3 افراد ہلاک اور 5 زخمی ہو گئے تھے۔ داعش نے اس حملے کی ذمہ داری قبول کی تھی۔