تحریک انصاف ایک بارپھر اختلافات کا شکارہوگئی

تحریک انصاف ایک بارپھر اختلافات کا شکارہوگئی


اسلام آباد(24نیوز) اپوزیشن کے بغیر قائمہ کمیٹیوں کی تشکیل کا معاملہ پر  ایک دھڑا اپوزیشن ارکان کے بغیر کمیٹیوں کی تشکیل کا حامی جبکہ دوسرے دھڑے نےتجویز کی مخالفت کردی۔

تفصیلات کے مطابق اپوزیشن کے بغیر قائمہ کمیٹیوں کی تشکیل کا معاملہ پر پی ٹی آئی  کےحالات کشیدہ ہو گئے، ایک دھڑا اپوزیشن ارکان کے بغیر فورا قائمہ کمیٹیوں کی تشکیل کا حامی تو  دوسرے دھڑے نے تجویز کی مخالفت کر دی، ذرائع کا کہنا تھا کہ و زیر اعظم،فوادچودھری، شاہ محمودسمیت اہم رہنما اپوزیشن کے بغیر کمیٹیاں تشکیل دینا چاہتے ہیں۔

اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر اور وزیر دفاع پرویز خٹک تجویز کے مخالف نکلے،  علاوہ ازیں اسپیکر اسد قیصر اور وزیر دفاع پرویز خٹک کو آخری مرتبہ اپوزیشن سے رابطہ کرنے کا اختیار مل گیا ہے، جس میں اسپیکر اسد قیصر اور وزیر دفاع پرویز خٹک تمام پارلیمانی جماعتوں سے رابطے کریں گے، وہ پارلیمانی جماعتوں کو قائمہ کمیٹیوں میں شامل ہونے پر قائل کریں گے۔

ذرائع کا کہنا تھا کہ اپوزیشن نے قائد حزب اختلاف شہباز شریف کو چئیرمین پی اے سی نہ بنانے پر قائمہ کمیٹیوں کے بائیکاٹ کا اعلان کر رکھا ہےاور وزیر اعظم عمران خان شہباز شریف کو چئیرمین پی اے سی نہ لگانے کا حتمی اعلان کر چکے ہیں۔ 

چئیرمین پی اے سی کیلئے حکومتی رکن فخر امام اس وقت موسٹ فیورٹ امیدوار ہیں، اپوزیشن کو منانے اور قائمہ کمیٹیوں کا حصہ بنانے کیلیے پیپلزپارٹی کے نوید قمر کا نام بھی زیر غور ہے۔