تحریک انصاف نے کہا چیئرمین سینیٹ کو ووٹ دینے کا اوپر سے آرڈر آیا ہے:سراج الحق

تحریک انصاف نے کہا چیئرمین سینیٹ کو ووٹ دینے کا اوپر سے آرڈر آیا ہے:سراج الحق


24 نیوز: جماعت اسلامی کے امیر سینٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ سینٹ الیکشن میں جنہوں نے ووٹ بیچا وہ تو مجرم ہیں، لیکن جس نے ووٹ خریدا کیا وہ مجرم نہیں؟ پی ٹی آئی کے ساتھ سینٹ کا الیکشن لڑتے، لیکن انہوں نے نامعلوم وجوہات کی بنیاد پر ہمارا ساتھ نہیں دیا۔

تفصیلات کے مطابق منصورہ میں تربیت گاہ سے خطاب کرتے سینٹر سراج الحق کا کہنا تھا کہ وزیراعلیٰ کے پی پرویز خٹک نے فون پر کہا کہ چیئرمین سینٹ کے انتخاب میں ہمارے ساتھ ملکر ووٹ دیں لیکن انہیں امیدوار کا پتاہی نہیں تھا۔ جب بھی ان سے پوچھا تو وہ یہی کہتے رہے کہ اوپر سے آرڈر ہے  پتا نہیں کیا راز تھا کیا وعدے تھے۔

یہ بھی پڑھیں:قرض نہیں تو نئے نوٹ سہی،حکومت ملک کیلئے بوجھ بن گئی 

 انہوں نے مزید کہا کہ پی ٹی آئی نے چئیرمین سینٹ کے لئے پیپلز پارٹی کے امیدوار کو ووٹ دیا اور ایوان میں عمران خان کے نہیں زرادری کے نعرے لگے۔

  سینٹر سراج الحق کا کہنا تھا کہ کرپشن کے سپیشلسٹوں کا علاج پیناڈول کی گولی سے نہیں ہوگا ان کےخلاف بڑا آپریشن چاہئے۔ 6 ہزار ایسے افراد ہیں جنہیں اڈایالہ جیل میں ہونا چاہئے۔ ساری قوم سپریم کورٹ کے ساتھ ہے۔ اگر حقیقی احتساب نہیں ہے تو پھر یہ صرف ہوائی فائرنگ ہی ہوگی۔

یہ بھی پڑھیں:”طیفا ان ٹربل“مزید چار خواتین نے علی ظفر پر جنسی ہراسگی کا الزام لگا دیا 

 امیر جماعت اسلامی کا کہنا تھا کہ نوازشریف اور مریم نواز لندن میں کلثوم نواز کی عیادت کے لئے گئے ہیں۔ وہ بتائیں کہ کیا انہوں نے کوئی ایک ڈھنگ کا ہسپتال یہاں بنایا۔ امیر طبقہ یہاں علاج کروانا اپنی توہین سمجھتے ہیں۔