یہ حکومت تاریخ کے بدترین دھاندلی زدہ انتخابات کے نتیجہ میں سامنے آئی ہے: احسن اقبال


 اسلام آباد( 24نیوز ) لیگی رہنما احسن اقبال نئی حکومت پر پھٹ پڑےانھوں نے کہا ہے کہ یہ حکومت تاریخ کے بدترین دھاندلی زدہ انتخابات کے نتیجہ میں سامنے آئی ہے۔ انکی ترجیحات اور ٹیم کانتخاب میں مایوسی ہوئی ہے۔

 انکی ناکامیوں کا بوجھ خود پر نہیں آنے دیں گے۔ ہم احتجاج بھی کریں گے اور انھیں فاش بھی کریں گے، نئے نو منتخب وزیراعظم عمران خان پر بھی لیگی رہنما نے تنقید کے خوب نشتر برسائے۔مسلم لیگ ن کے رہنما احسن اقبال نے اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے نئی حکومت کو کڑی تنقید کا نشانہ بنایا احسن اقبال نے کہا کہ انتقال اقتدار دھاندلی کی بنیاد پر ہونے کے باوجود ہم نے اپنی سیاسی جدوجہد کو آگے بڑھایا، نو منتخب وزیراعظم عمران خان پر تنقید کرتے ہوئے لیگی رہنما نے کہا کہ عمران خان کا پورا خطاب سن کر حیرت ہوئی۔

وزیر اعظم کو یہ معلوم نہیں کہ وفاقی اور صوبائی حکومتوں کے اختیارات کیا ہیں۔ نئی حکومت نا تجربہ کار ہے اور سیاسی امور سے نابلد ہے۔ افسوس انکی ترجیحات اور ٹیم کے انتخاب میں ہمیں مایوسی ہوئی ہے۔ احسن اقبال نے کہا کہ عمران خان نے دو تقریریں کریں لیکن کلبھوشن کا نام نہیں لیا کشمیر پر کوئی یقین دہانی حاصل نہیں کی کراچی کے عوام کے ساتھ بھی کوئی ترقیاتی کام کا وعدہ نہیں کیا گیا اور ہم پر وزیر خارجہ کے لیے تنقید کرنے والوں نے وزارت داخلہ کا عہدہ بھی خالی چھوڑا ہے جس پر تشویش ہے۔

 لیگی رہنما نے یہ بھی کہا کہ ہمیں خدشات ہیں کہ جو منصوبے ہم نے شروع کئے ان منصوبوں کا کیا بنے گا۔ عمران خان میگا پراجیکٹس کی تکمیل کا اعلان کرتے۔ احسن اقبال نے یہ بھی کہا کہ ہم انکے راستے میں کوئی رکاوٹ نہیں ڈالیں۔ اگر عمران خان بے لاگ شفاف احتساب کریں گے اسکا ساتھ سب دیں گے۔ ابھی تک لگ رہا ہے کہ احتساب یک طرفہ ہوگا۔

شازیہ بشیر

   Shazia Bashir   Edito