سابق صدر کو جیل میں اے کلاس ملے گی؟

سابق صدر کو جیل میں اے کلاس ملے گی؟


اسلام آباد(24نیوز) احتساب عدالت اسلام آباد نے آصف علی زرداری اور فریال تالپور کو جیل میں اے کلاس کی سہولیات دینے کی درخواستوں پر فیصلہ محفوظ کر لیا۔  عدالت نے فریال تالپور کی راہداری ریمانڈ کی درخواست پر بھی فیصلہ محفوظ کر لیا ۔

احتساب عدالت اسلام آباد میں آصف زرداری اور فریال تالپور کی جیل میں اے کلاس اور سہولیات اور فریال تالپور کی راہداری ریمانڈ پر سندھ اسمبلی اجلاس میں شرکت کی درخواستوں پر سماعت ہوئیْ۔ فریال تالپور کے وکیل فاروق ایچ نائیک نے دلائل دیے کہ فریال تالپور ایم این اے رہی اور اب ایم پی اے ہیں اور سابق صدر کو تمام عمر کیلئے یہ سہولیات آئین پاکستان دیتا ہے، جس پر نیب پراسیکوٹر سردار مظفر نے عدالت کو بتایا کہ جیل میں اے اور بی کلاس کا رول ختم کر دیا گیا، اب بہتر سہولت بیٹر کلاس ہے، متعلقہ فورم پر آئی جی پرزنز کو درخواست دینی ہوتی ہے ۔

راہداری ریمانڈ کی درخواست پر پراسیکیوٹر نیب نے دلائل دیے کہ یہ عدالت راہداری ریمانڈ کی درخواست نہیں سن سکتی جس پر فریال تالپور کے وکیل فاروق ایچ نائیک نے بتایا کہ اس سے قبل بھی نیب کی جانب سے راہداری ریمانڈ نہ ملنے پر اس عدالت میں درخواست دائر کی ہے ۔ جج محمد بشیر نے تینوں درخواستوں پر فیصلہ محفوظ کر لیا۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔