حکومت نہ رہی لیکن حکمرانی کا شوق نہ گیا

 حکومت نہ رہی لیکن حکمرانی کا شوق نہ گیا


راولپنڈی ( 24نیوز ) میاں نوازشریف خود تودس سال کے لیے اندر ہو گئے لیکن دیگر قیدیوں کی رہائی کے لیے بندوبست کرنے لگے، نوازشریف باہر تو تاحیات نااہل ہوئے لیکن جیل میں اپنی حکمرانی کے شوق پورکررہے ہیں۔

حکمرانی نہ رہی تو کیا ہوا حکمرانی کا شوق تو ہے، میاں  نوازشریف جیل میں ہدایات دینے لگے اور  قیدیوں  کی فہرست  بھی  مانگ   لی  نواز شریف  نے   جرمانے ادا نہ کرسکنے کی وجہ سے جیل میں قید  قیدیوں کی فہرست مانگی ،  سابق وزیراعظم کا کہنا ہے وہ  اپنی جیب سے  رقم ادا کرکے قیدیوں کوآزادی دلوائیں گے۔

یہ بھی پڑھیں:پنجاب کی نگران حکومت پی ٹی آئی کو سپورٹ کررہی ہے:شہباز شریف 

دہائیوں پرمشتمل دورحکمرانی میں ن لیگ عوام کوتوصاف پانی کی سہولت نہ دے سکی لیکن نوازشریف جیل میں پانی کے لیے بورنگ بھی کروائیں گے، قیدیوں کوسایہ میسر ہو اس کے لیے بیرک کے باہر شیڈ بھی تیار کروائے جائیں گے۔میاں نوازشریف حکمران تونہ رہے لیکن ہدایات دینے کا شوق نہ گیا، جیل میں ذاتی اسٹاف کو فلاحی کام جلد مکمل کرنے کی ہدایت بھی جاری کردی۔

پڑھنا نہ بھولیں:پنڈی بوائے شیخ رشید کی مہم کون چلا رہا ہے؟ 

ڈپٹی سپرینٹنڈنٹ جیل نے بھی جیسے میاں صاحب کووزیراعظم مان لیا اورتمام تفصیلات ان کے اسٹاف کوفراہم کردیں،،جرمانے ادا نہ کرسکنے والے قیدیوں کی فہرست کی تیاری بھی شروع کردی گئی۔جیل ذرائع کا کہنا ہے جرمانے ادا ہونے سے بہت سے قیدیوں کو جیل سے رہائی مل جائے گی

شازیہ بشیر

   Shazia Bashir   Edito