سروسز ہسپتال کے ڈاکٹروں کی نااہلی اور غفلت کا بڑا ثبوت سامنے آ گیا

سروسز ہسپتال کے ڈاکٹروں کی نااہلی اور غفلت کا بڑا ثبوت سامنے آ گیا


لاہور(24نیوز) ڈاکٹرز کی غفلت اور نااہلی کا ایک اور واقعہ، سروسز ہسپتال کے سپیشل گائنی یونٹ میں دوران آپریشن ڈاکٹر کاٹن اندر ہی بھول گے۔

تفصیلات کے مطابق لاہور کی رہائشی 24 سالہ منسہ فیصل کا ایک ماہ قبل آپریشن ہوا۔منسہ فیصل کا 28 مئی کے سروسز ہسپتال سپشیل گائنی یونٹ سے آپریشن ہوا۔ آپریشن کے زریعے منسہ کے ہاں بیٹے کی پیدائش ہو ئی۔

یہ بھی لازمی پڑھیں:کپتان نےکارکنوں کوشٹ اپ کال دے دی 

 اہل خانہ کے مطابق ڈاکٹرز نے 4 دن بعد منسہ کو گھر بھیج دیا۔    منسہ کو تکلیف کے باعث مختلف پرائیوٹ ہسپتالوں میں چیک اپ کروایا گیا۔الٹراساونڈ کی رپورٹ کے مطابق دوران آپریشن کے دوران کاٹن کا ٹکرا جسم کے اندر رہ گیا تھا۔ کاٹن کا ٹکڑا اندر رہنے کی وجہ سے مریضہ کی حالت بدستور تشویشناک ہے۔ دوسری جانب سروسز ہسپتال کے ڈاکٹر ز کا کہنا تھا کہ نسوں میں سوجن ہے کاٹن کا ٹکڑا اندر نہیں ہے۔