کراچی میں رینجرز اور پولیس کی امن دشمنوں کے خلاف کارروائیاں جاری


کراچی (24نیوز): کراچی میں رینجرز اور پولیس کی امن دشمنوں کے خلاف کارروائیاں جاری ہیں، ایم کیو ایم کے سابق یونٹ انچارج سمیت 9 ملزموں کا گرفتار کر لیا گیا، سرجانی پولیس مقابلے میں ایک ڈاکو ہلاک جبکہ ناظم آباد میں فائرنگ سے خاتون سمیت 2 افراد زخمی ہو گئے۔

کراچی میں قانون نافذ کرنے والے ادارے جرائم پیشہ افراد کے خلاف ایکشن میں۔نیوکراچی کے نجی اسپتال میں علاج کے لئے آنے والا ایم کیو ایم کا سابق یونٹ انچارج دھر لیا گیا۔ملزم شہر میں وال چاکنگ اور افراتفری پھیلانے میں ملوث ہے۔لیاری میں قانون نافذ کرنے والے ادارے نے کارروائی کر کے گینگ وار کے عزیر بلوچ گروپ کے 2 کمانڈروں کو گرفتارکر لیا، ملزم جمشید اور نیازو پولیس کو قتل ، اقدام قتل، بھتہ خوری اور تھانوں پر حملوں کے مقدمات میں مطلوب تھے۔

رینجرز نے مختلف علاقوں میں کارروائیاں کرتے ہوئے ایم کیو ایم لندن کے کارندے محسن مرزا سمیت 6 ملزمان کو گرفتار کیا.سرجانی میں پولیس مقابلے کے دوران ایک ڈاکو ہلاک ہو  گیا، ملزم شہریوں سے لوٹ مار کر کے فرار ہو رہا تھا۔دوسری جانب ناظم آباد گول مارکیٹ میں فائرنگ سے ایک خاتون سمیت 2 افراد زخمی ہوئے.پولیس کے مطابق نامعلوم ملزمان نے گھر میں داخل ہونے کی کوشش کی، مزاحمت کرنے پر ملزمان فائرنگ کر کے فرار ہو گئے۔