پانچ سالہ قومی ٹیرف پالیسی جاری

پانچ سالہ قومی ٹیرف پالیسی جاری


اسلام آباد(وقاص عظیم) وزارت تجارت نے پانچ سالہ 2019-24قومی ٹیرف پالیسی جاری کردی, قومی ٹیرف پالیسی پر یکم جولائی 2020سے عمل درآمد ہوگا, پالیسی اقدامات پر آئندہ پانچ سال کے دوران عمل درآمد کیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق  وزارت تجارت نے پانچ سالہ 2019-24قومی ٹیرف پالیسی جاری کردی،قومی ٹیرف پالیسی پر یکم جولائی 2020سے عمل درآمد ہوگا,پالیسی اقدامات پر آئندہ پانچ سال کے دوران عمل درآمد کیا جائے گا, ٹیرف پالیسی میں اصلاحات لائی جائیں گی،مقامی صنعت کو اسٹریٹیجک تحفظ دیا جائے گا،مقامی صنعت کو عالمی مسابقت کے قابل بنایا جائے گا۔

وزارت تجارت کا کہناتھا کہ خام مال پر ڈیوٹیز بتدریج کم کی جائیں گی, خام مال اور مشینری پر زیرو ڈیوٹی کو 3فیصد کے سلیب میں تبدیل کیا گیا,ڈیوٹی سلیب سے مینوفکچرنگ شعبے کی مسابقت بری طرح متاثر ہوئی, پاکستان میں ٹیرف 70برآمدی ممالک کے مقابلے میں سب سے زیادہ ہے، پاکستان کا اوسط ٹیرف 12.7فیصد ہے,چین کا ٹیرف 3.8,بھارت 5.8,جنوبی ایشیاء ممالک کا ٹیرف 5.9فیصد ہے۔

اس وقت 3,11,16اور 20فیصد کے چار مختلف ڈیوٹی سلیب نافذ ہیں,2747ٹیرف لائنز 3فیصد کے ڈیوٹی سلیب میں آتے ہیں, 1096ٹیرف لائنز 11فیصد کے ڈیوٹی سلیب میں آتے ہیں,513ٹیرف لائنز 16فیصد,2419ٹیرف لائنز 20فیصد کے ڈیوٹی سلیب میں آتے ہیں,ان سلیب پر 2,4اور 7 فیصد ایڈیشنل کسٹمز ڈیوٹی بھی لاگو ہے، ٹیرف پالیسی کے تحت ملک میں روزگار کے مواقع پیدا کئے جائیں گے۔