کیا اسحاق ڈار نے برطانیہ میں سیاسی پناہ کی درخواست دی؟

کیا اسحاق ڈار نے برطانیہ میں سیاسی پناہ کی درخواست دی؟


لندن(24نیوز)سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار کا لندن ہوم آفس جانے کا معاملہ، اسحاق ڈار سیاسی پناہ کے درخواست دینے ہوم آفس گئے، چہ میگوئیاں شروع ہوگئیں۔

 ذرائع کے مطابق پاکستان کے سابق وزیرِ خزانہ اسحاق ڈار نے برطانیہ میں سیاسی پناہ کی درخواست دیدی ہے، انہوں نے پاکستانی پاسپورٹ کی منسوخی کے بعد برطانوی ہوم آفس میں اپنی شہری حیثیت کو واضح کیا اور میڈیکل سرٹیفکیٹ بھی دکھائے۔اسحاق ڈار نے سیاسی پناہ کے موقع پر برطانوی ہوم آفس کے ایک اہلکار کے ساتھ تصویر بھی بنوائی جو زیر گردش ہے۔

دوسری جانبخاندانی ذرائع نے سیاسی پناہ کی تردید کی ہے، ان کے مطابق اسحاق ڈار نے اپنی میڈیکل رپورٹس اور دیگر کاغذات ہوم آفس میں پیش کئے، ہوم آفس کے ملازم نے اسحاق ڈار کے ساتھ تصویر بنوائی، جسے غلط رنگ دیا گیا۔

فواد چودھری کا ردعمل:

وفاقی وزیر اطلاعات فواد چودھری نے سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار کی برطانیہ میں سیاسی پناہ کی درخواست پر ردعمل دیتے ہوئے کہاہے کہ سیاسی پناہ کی درخواست سے ثابت ہوگیاہے کہ اسحاق ڈار چور ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اسحاق ڈار کے ہاتھ صاف ہوتے تو ملک سے فرار نہ ہوتے ، ان کی سیاسی پناہ کی درخواست برطانوی حکومت کے لئے بھی امتحان ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ عوام چاہتی کے عالمی برادری ملک لوٹنے والے کیخلاف ساتھ دے ، اسحاق ڈار کوچاہئے کہ عدالتوں کا سامنا کریں ، قانونی عمل سے بھاگنے کا مطلب جرم قبول کرناہے ۔ انہوں نے کہا کہ مطلوب ملزم کیخلاف قانون اپنا راستہ خود بنائیگا ۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔