ڈاکٹرز کی سنگین غلطی ،زندہ خاتون کو مردہ قراردےدیا

ڈاکٹرز کی سنگین غلطی ،زندہ خاتون کو مردہ قراردےدیا


کراچی ( 24نیوزکراچی میں لیاقت نیشنل ہسپتال کی سنگین غلطی سامنےآگئی،ڈاکٹرزنے زندہ خاتون کو مردہ قراردےدیا۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں قائم لیاقت ہسپتال کے ڈاکٹروں کی سنگین غلطی سامنے آگئی، زندہ خاتون کو مردہ قراردے دیا، خاتون کو زچگی کےمعاملہ پرہسپتال لایاگیا تھا، دوران علاج دو بچوں کی ہلاکت بھی ہوگئی، خاتون کی افسوسناک خبر سن کر اہل خانہ نے قبر بھی کھدوا دی، بعد ازاں لیاقت نیشنل ہسپتال انتظامیہ نے معاملے کی تردید کردی۔

لواحقین نے ہسپتال عملہ پر الزام لگایا کہڈاکٹروں نے جان بوجھ کر زندہ خاتون کو مردہ قرار دے دیا ،جس پر انتظامیہ سے مریضہ کی میڈیکل فائل مانگی گئی تو ہسپتال انتظامیہ نےفائل دینے سے انکار  کردیا،اہل خانہ نے مریضہ کے پاوں پر ہاتھ لگایا تو حرکت میں آگئی ، لیاقت نیشنل ہسپتال کے ترجمان انجم رضوی کا کہناتھاکہ میں ہونے والے معاملے کی تردید کرتا ہوں۔

انہوں نے کہا کہ6 روز قبل منہاس نامی خاتون کو سیون ڈے ہسپتال سے لیاقت نیشل منتقل کیا گیا تھا،جب لیاقت نیشنل لایا گیا تو دونوں بچے مردہ تھے،منہاس کو فوری طبی امداد فراہم کی گئی،بچوں کے مردہ ہونے کے باعث منہاسں کا دماغ مفلوج ہو گیا،انتظامیہ کی جانب کو کوئی فائل نہیں چھینی گئی۔