دبئی میں کاروبار کرنیوالے تاجروں ،کمپنیوں کیلئے بڑی خوشخبری

دبئی میں کاروبار کرنیوالے تاجروں ،کمپنیوں کیلئے بڑی خوشخبری


دبئی (ویب ڈیسک) دبئی دنیا کا وہ واحد شہر جس میں دنیا بھر کی کمپنیاں اپنا کاروبار کرتی ہیں،عرب کے صحرا میں سمندر کنارے آباد یہ شہر عرب امارات کیلئے ریونیو کا بہترین ذریعہ ہے،یہاں باہر سے آنیوالوں کیلئے قوانین سخت ہیں،اب دبئی میں کاروبار کرنیوالے غیر ملکیوں کیلئے خوشخبری آگئی ہے۔
بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق دبئی کے حکمراں راشد المکتوم کی سربراہی میں ہونے والے ایک اہم اجلاس میں ویزا پالیسی سے متعلق انقلابی فیصلے کیے گئے ہیں۔ جس کے تحت غیر ملکی کمپنیوں کو سو فیصد ملکیت دے دی جائے گی جب کہ سرمایہ کاروں، سائنس دانوں، ماہرین طب، انجینیئرز، ملازمتیں فراہم کرنے والے ادارے اور تاجروں کے لیے دس سال کا رہائشی ویزہ متعارف کرا رہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: پانامہ کیس فیصلہ غیر مناسب تھا:نواز شریف

اجلاس میں یہ بھی فیصلہ کیا گیا ہے کہ دبئی نے تخلیقی صلاحیتوں کے حامل افراد اور تاجروں کو ہمیشہ خوش آمدید کہا ہے اور آئندہ بھی اعلیٰ اذہان اور کامیاب تاجر قیادت کو خوش آمدید کہا جائے گا۔ اسی طرح دبئی امارات میں تعلیم حاصل کرنے کی غرض سے آنے والے غیرملکی طلبا کو 5 سالہ رہائشی ویزا جب کہ غیرمعمولی صلاحیت کے حامل طلبا کے لیے 10 سالہ رہائشی ویزا جاری کیا جائے گا۔
دبئی کے حکمراں راشد المکتوم نے غیر ملکی کمپنیوں کو صد فیصد ” فارن آنر شپ “ دینے کا اعلان کردیا ہے جب کے اس سے قبل سرمایہ کاروں کو صرف 49 فیصد حق ملکیت ملتا تھا-
اجلاس میں ویزا پالیسی سے متعلق نئے فیصلوں کو رواں سال کے اختتام تک قابل عمل بنانے کے لیے ضروری اقدامات کا بھی فیصلہ کیا گیا جب کے متعلقہ اداروں کے افسران کو پالیسی پر جلد از جلد عمل درآمد کو یقینی بنانے کے لیے خصوصی ہدایات بھی کی گئیں۔