افطار ڈنر کی اندورنی کہانی سامنے آگئی

افطار ڈنر کی اندورنی کہانی سامنے آگئی


اسلام آباد( 24نیوز ) پی پی چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کی جانب سے دیئے گئے افطار ڈنر کی اندورنی کہانی 24 نیوز نے پتہ کرلی، اپوزیشن جماعتوں کی اکثریت قبل از وقت انتخابات کی حامی ہے، حکومت کو گھر بھجوانے کے لئے روڈ میپ عید کے بعد اے پی سی میں بنایا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق حکومت کو گرانے پربلاول بھٹو زرداری، مریم نواز ،مولانا فضل الرحمن اور دیگر رہنما ایک پیج پر ہیں اور اپوزیشن جماعتیں آئندہ برس فروری یا مارچ میں مڈٹرم انتخابات کے لئے پر امید ہیں، بلاول بھٹو زرداری کی جانب سے دیئے گئے افطار ڈنر کے بعد ہونے والے غیر رسمی اجلاس میں اپوزیشن کا اتفاق تھا کہ 9 ماہ میں ملک تباہی کے دہانے پر پہنچ چکا ہے لہذا6 ماہ میں موجودہ حکومت سے ہر صورت جان چھڑائی جائے تاکہ ملک کو ترقی کے راہ پر گامزن کیا جا سکے۔

ذرائع کے مطابق اپوزیشن اتحاد اس بات پر بھی متفق تھی کہ حکومت مزید 6 ماہ پورے کر گئی تو ملک کا دیوالیہ نکل جائے گا، اجلاس میں مریم نواز نے تجویز دی کہ عید کے بعد الگ الگ جلسے جلوس نکال کر عوام کو چارج کیا جائے، عوام سڑکوں پر نکلے تو سیاسی قیادت مورچہ سنبھالے اور حکومت کو رخصت کرے جبکہ اپوزیشن قیادت بھی اتفاق رکھتی ہے کہ نومبر تک موجودہ حکومت کو گھر بھیجنے کا ہدف رکھا جائے،ذرائع کامزید کہناتھاکہ عید کے بعد اے پی سی میں حکومت کو گھر بھیجنے سے متعلق لائحہ عمل طے کر کے حتمی فیصلے کئے جائیں گے ۔

ضرور پڑھیں:کھراسچ، 18 جون 2019

M.SAJID KHAN

CONTENT WRITER