نیب کا مقصد سیاستدانوں کی پگڑیاں اچھالنا ہے: سابق وزیراعظم



اسلام آباد(24نیوز) سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ نیب کا ایک ہی مقصد ہے کہ سیاستدان پر الزام لگایا جائے،  سیاستدانوں کی پگڑیاں اچھالی جا رہی ہیں۔ 

مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور سابق وزیراعظم خاقان عباسی نے قومی احتساب بیورو( نیب ) کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ نیب والے سینکڑوں افسروں کو ڈرا رہے ہیں، معیشت کی تباہی میں نیب کا بہت بڑا حصہ ہے، جوسوالنامہ مجھے بھیجا گیا کابینہ کو بھی بھیجا جائے، میں نے نیب کوگوشوارے بھرکردیئے، چیئرمین نیب معذرت کے ساتھ ملک کے جتنے ٹھیکیدار ہیں اتنا میں بھی ہوں۔  3500کیس چل رہے ہیں کسی کا فیصلہ نہیں ہوتا۔

سابق وزیراعظم نے کہا کہ  نیب غیرجانبدار ادارہ نہیں، ہم یہ پوچھنا چاہیں گے کہ چیئرمین نیب کے ویوز کیا ہیں؟  نیب نے بیوروکریسی کو مفلوج کردیا ہے، نیب کا آج بھی یہی مقصد ہے کہ سیاستدان پر الزام لگایا جائے،  سیاستدانوں کی پگڑیاں اچھالی جا رہی ہیں۔ سیاستدانوں کوبدنام کرنا روایت بن گئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ  علیم خان کی ضمانت ہوجاتی ہے،فوادحسن فواد اور احد چیمہ کی نہیں، چیئرمین نیب جھوٹ بول رہے ہیں یا صحافی، چیئرمین نیب نے انٹرویو میں بتایا کہ انہیں رشوت کی پیشکش کی گئی، چیئرمین نیب کے انٹرویو میں دو بیوروکریٹ کا نام لیا گیا۔

خاقان عباسی نے کہاشہبازشریف کی کبھی چیئرمین نیب سے ملاقات نہیں ہوئی، چیئرمین نیب کا عہدہ نہیں کہ پریس میں آکرباتیں کریں،چیئرمین نیب نے جوباتیں کیں وہ کبھی نہیں ہوئیں۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔