ملتان میں پولیس اہلکاروں کا بزرگ جوڑے پر تشدد، وزیراعلیٰ کا نوٹس


ملتان(24نیوز): ملتان میں پلاٹ کی ملکیت کے لئے احتجاج کرنیوالے بزرگ جوڑے کو پولیس اہلکاروں نے تشدد کا نشانہ بنا ڈالا۔ وزیر اعلیٰ پنجاب نے ڈی ایس پی، ایس ایچ او اور متعلقہ اہلکاروں کو معطل کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق محمد ادریس نامی بزرگ شہری اہلیہ نسیم بی بی کے ہمراہ اپنے پلاٹ کی ملکیت لینے کے لئے ایم ڈی اے آفس آیا۔ ایم ڈی اے افسران کی جانب سے شنوائی نہ ہونے پر بزرگ شخص نے احتجاج شروع کر دیا۔ احتجاج کرنے پر پولیس اہلکاروں نے میاں بیوی کو بری طرح تشدد کا نشانہ بنا ڈالا۔ سڑک پر گھسیٹتے ہوئے تھانہ میں بند کردیا۔

 

 میڈیا پر خبر آنے کے بعد پولیس افسران حرکت میں آئے سی پی ملتان نے ایس ایس پی آپریشنز عمارہ اطہر کو اس معاملے کی انکوائری کر کے رپورٹ پیش کرنے کا حکم دے دیا۔

 

بزرگ شہری محمد ادریس نے میڈیا کو بتایا کہ فاطمہ جناح کالونی میں ان کی 5 کنال 6 مرلے کی اراضی کو ایم ڈی اے افسران ہڑپ کرنا چاہتے ہیں۔ 6 روزسے ایم ڈی اے آفس کے چکر کاٹ رہے ہیں لیکن کوئی بات سننے کو ہی تیار نہیں۔

 

دوسری جانب وزیر اعلیٰ پنجاب میاں محمد شہباز شریف نے بزرگ جوڑے پر تشدد کے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئےڈی ایس پی، ایس ایچ او اور متعلقہ اہلکاروں کو معطل کرکے سی پی او سے رپورٹ طلب کرلی۔