کرکٹ میں بڑا "اسپاٹ فکسنگ سکینڈل" منظر عام پر آگیا

کرکٹ میں بڑا
cric scandal


لندن(24نیوز)میچ فکسنگ کا ایک اور سنسنی خیز اسکینڈل منظرعام پرآگیا، الجزیرہ ٹی وی کی رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ 12-2011کے دوران 15 انٹرنیشنل میچ فکس تھے۔ تین میچز میں پاکستانی کرکٹر فکسنگ میں شامل تھے۔

رپورٹ کے مطابق تین میچز میں پاکستانی کرکٹر ، 7میچزمیں انگلینڈ کےکرکٹرز اسپاٹ فکسنگ میں ملوث تھے جبکہ پانچ میچزمیں آسٹریلوی کرکٹرکےعلاوہ دیگرممالک کےکھلاڑی اسپاٹ فکسنگ میں شامل تھے۔

رپورٹ کے مطابق وڈیواورتصاویرمیں پاکستانی کرکٹرعمراکمل اور بھارتی کرکٹرویرات کوہلی نظر آرہے ہیں۔ شرما،بالاجی،سریش رائنااورآسٹریلوی کرکٹراینڈی بکل بھی تصاویرمیں نظرآرہےہیں۔

اسپاٹ فکسنگ کے حوالے سے عرب میڈیا کی ڈاکیومینٹری جاری کی گئی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ اسپاٹ فکسنگ میں بھارتی فکسر انیل منور ملوث ہے۔ 15 انٹرنیشنل میچز میں اسپاٹ فکسنگ کے26 واقعات ہوئے۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔