حکومت کے لوڈ شیڈنگ ختم کرنے کے دعوے دھرے کے دھرے رہ گئے

حکومت کے لوڈ شیڈنگ ختم کرنے کے دعوے دھرے کے دھرے رہ گئے


اسلام آباد(24نیوز) حکومت نے لوڈشیڈنگ کا دورانیہ کم کرنے کی بجائے بڑھانے کا فیصلہ کرلیا ہے۔ سندھ، خیبرپختونخوا اور بلوچستان کے صارفین زیادہ متاثر ہوں گے۔

وفاقی حکومت کے لوڈ شیڈنگ ختم کرنے کے دعوے دعوے دھرے کے دھرے رہ گئے۔ لوڈشیڈنگ کےدورانیے میں کمی کی بجائے اضافے کا فیصلہ کرلیا گیا ہے۔

ذرائع کے مطابق ملک کے 39فیصد صارفین کیلئے لوڈ شیڈ نگ میں 2سے 6 گھنٹے اضافے کا منصوبہ تیار کرلیا گیا ہے۔ بجلی چوری کے سبب لوڈشیڈنگ میں اضافہ کیا جارہا ہے۔

ذرائع کےمطابق سندھ ،خیبر پختونخوا اور بلوچستان کے صارفین زیادہ متاثرہوں گے۔ ذرائع کا کہنا ہےکہ بجلی کی تقسیم کارکمپنیوں کے39فیصد فیڈرز پر4 سے16گھنٹے تک کی لوڈ شیڈنگ کا شیڈول تیارکرلیا گیا ہے۔

دوسری جانب حکومت نے عوام کو ایک اورلالی پوپ دے دیا ہے۔ حکومت نے بجلی کی قیمت میں 3 روپے 24 پیسے فی یونٹ کمی کی منظوری دے دی ہے۔ یہ کمی ماہانہ فیول ایڈجسٹمنٹ کی مد میں جنوری کے لیے کی جائے گی۔