دنیا میں ٹائیفائیڈ مرض کا نیا بیکٹیریا پھیلنے لگا

دنیا میں ٹائیفائیڈ مرض کا نیا بیکٹیریا پھیلنے لگا


اسلام آباد(24نیوز) دنیا میں ٹائیفائیڈ مرض کا نیا بیکٹیریا پھیلنے لگا،پاکستان میں سندھ کے علاقہ سب سے زیادہ متاثرہورہے ہیں،ماہرین کے مطابق مرض کی اس نئی قسم پرمدافعتی ادویات اثرنہیں کررہیں۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان میں شعبہ صحت کو نئی مشکل درپیش ہیں۔ سندھ کے علاقوں میں ٹائیفائیڈ مرض کی نئی قسم پھیلنے لگی۔ ماہرین نےٹائیفائیڈ کی اس نئی قسم کو سپر بگ کا نام دیا ہے۔ آغا خان یونیورسٹی اوربرطانیہ کی کیمبرج یونیورسٹی کے طبی ماہرین کی تحقیق کے مطابق اس نئی قسم پربہت کم اینٹی بائیوٹکس اثرکرتی ہیں اور یہ دوبارہ خوبخود جنم لے لیتا ہے۔ ٹائیفائیڈ کا یہ جراثیم 14 ماہ قبل سب سے پہلے صوبہ سندھ میں دریافت ہوااوراب ملک کے کئی مقامات اور برطانیہ تک بھی پھیل چکا ہے۔محققین کے مطابق اس کا علاج مہنگا اور پیچدہ ہے۔

واضح رہے کہ ٹائیفائیڈ کی نئی قسم سے 5 سے15سال کی عمرکے بچے زیادہ متاثرہورہےہیں۔ حیدرآباد کے علاقہ لطیف آباد اور قاسم آباد میں تقریباً ڈھائی لاکھ بچوں کو نئی ٹائپ بار۔ ٹی وی سی ویکسین دی جارہی ہے۔یہ ویکسین اس قسم کے ٹائیفائیڈ کی روک تھام کا موثرترین حل ہے۔ تحقیق میں اس ٹائیفائیڈ کی وجہ آلودہ پانی کوقراردیا گیاہے۔ماہرین نے بچاؤ کے لیے پانی ابال کرپینے کا مشورہ دیا ہے۔