کیلاش قبیلہ کی خواتین کو ہراساں کرنیوالا شخص ایمل دو سال بعد گرفتار

کیلاش قبیلہ کی خواتین کو ہراساں کرنیوالا شخص ایمل دو سال بعد گرفتار


پشاور ( 24 نیوز ) چترال میں کیلاش قبیلہ کی خواتین کو دوسال پہلے ہراساں کرنے والے شخص ایمل کو گرفتار کر لیا گیا۔

24 نیوز کے مطابق خیبر پختونخوا میں سیاحت کے حوالے سے معروف مقام چترال میں کیلاش قبیلہ کی خواتین کی زبردستی تصویریں اتارنے اور ویڈیوز بنانے والے شخص کی شناخت ہو گئی جس کے بعد اسے گرفتار کر لیا گیا۔

یہ بھی پڑھیں: اچھا کھانا نہ بنانا بیوی کیلئے سزا بن گیا 

ملزم کو پشاور سے گرفتار کیا گیا ہے۔ جس پر خواتین کو ہراساں کرنے کا الزام ہے۔ ملزم کا نام ایمل جبکہ متھرا پشاور کا رہنے والا ہے۔ دو سال قبل جب سیاحتی غرض سے چترال آیا تو یہاں اپنے فون سے ویڈیو بنائی جو سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی۔

واضح رہے کہ خواتین کو ہراساں کرنے کی ویڈیو سوشل میڈیا پہ وائرل ہوئی تھی۔ جس کے بعد چترال کی لیڈی پولیس نے ایمل کو پشاور سے گرفتار کیا۔