کراچی پینے کے پانی کو ترس گیا

کراچی پینے کے پانی کو ترس گیا


 کراچی(24نیوز) پانی کی فراہمی کا منصوبہ 10 سال کے بعد بھی خواب ہی رہ گیا۔ شہر کے لئے 65 کروڑ گیلن پانی کی فراہمی ناکافی ہوگئی۔

 تفصیلات کے مطابق ملک کا سب بڑا شہر کراچی پینے کے پانی کو ترس گیا۔ شہر کراچی کو 650 ملین گیلن پانی فراہم کیا جاتا ہے۔ لیکن 10 سال تک یہ منصوبہ کاغذوں ہی پر ہی رہا۔

 2016 اگست میں منصوبہ کے پہلے فیز کا افتتاح ہونا تھا جو تاحال مکمل نہ

ہوسکا۔ کے فور پروجیکٹ کے ڈائریکٹر اسد زامن کے مطابق منصوبے کو جلد مکمل کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ منصوبہ کا پہلے فیز 2019 میں مکمل کرلیا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں:کراچی: گلشن اقبال کے علاقہ میں پانی کی فراہمی بند

 پانی کے اس منصوبے کو تین مرحلوں میں مکمل کرنے پر کل لاگت کا تخمینہ 12 ارب روپے لگایا گیا تھا جو اب 25 ارب روپے سے تجاوز کرچکا ہے۔ اس منصوبے کے لئے کینجھر جھیل سے 121 کلومیٹر لمبی نہر کھودی جائے گی۔

 جس کے ذریعے شہر کو پانی کی فراہمی ممکن ہوسکے گی۔ لیکن شہریوں کا سوال ہے کہ آخر یہ منصوبہ مکمل کب ہوگا؟َ اور پانی کب ملے گا؟