" ڈالرکاذخیرہ کرنا حرام ہے"



اوکاڑہ(24 نیوز) پاکستان علماء کونسل کے چیئرمین حافظ طاہرمحموداشرفی کاکہنا ہے کہ ملک کو اس وقت ڈالر کی ضرورت ہے۔

کونسل کے دارالافتاء کے مطابق ڈالرکاذخیرہ کرنا حرام ہے۔ جن کے پاس ڈالر ہیں وہ ان کو نکال دیں کیونکہ ملک کااستحکام سب کا استحکام ہے۔ اسٹیٹ بینک بھی اپنی پالیسی کوتبدیل کرے، حکمران عوام کواعتماد میں لیں، اپوزیشن کا اتحاد حکومت کونہیں گراسکتا۔ اسٹیٹ بینک کوچاہیے کوئی ایسی پالیسی بنائے کہ تاجر برادری، عوام ڈالر ان کے پاس امانت کے طور پر جمع کروائیں۔حکمران عوام کو اعتماد میں لیں تاکہ ملک بچاؤ قرض اتارو جیسی صورتحال نہ ہو. عوام اعتماد کر سکیں۔

علامہ طاہرمحموداشرفی کا مزید کہنا تھا کہ سعودی عرب سے ہمارا عقیدت کارشتہ ہے اور ایران ہمارا پڑوسی ہے ہم سمجھتے ہیں بات چیت سے مسائل حل ہونے چاہئیں جس کے لیے پاکستان کو آگے بڑھ کر کردار ادا کرنا چاہیے۔ حو ثی باغیوں کی مد د یا اس طرح کے کسی دہشت گرد گروہوں کی امداد بند ہونی چاہیے. دنیا  امن چاہتی ہے۔سعودی عرب کے امن سلامتی اور دفاع کے لئے ہر طرح سعودی عرب کے ساتھ ہیں اور جو کل اور پرسوں حملے ہوئے اس کی مذمت کرتے ہیں. 

 پاکستان علماء کونسل کے دارالافتاء نے آج فتویٰ جاری کیا ہے کہ ڈالر کا ذخیرہ یا جن چیزوں کی ملک کو ضرورت ہے اس کا ذخیرہ حرام ہے، احتساب سب کا ہونا چاہیے اور غیر جانبدار ہونا چاہیے.