نواز شریف،مریم نواز کے ساتھ ”ہاتھ“ہوگیا


اسلام آباد( 24نیوز )سابق وزیر اعظم نواز شریف ان کی صاحبزادی مریم نواز لندن سے واپس پاکستان پہنچ چکے ہیں،دونوں احتساب عدالت میں مقدمات کی سماعت کیلئے پیش ہوگئے ہیں،ان کے داماد کیپٹن(ر)محمد صفدر بھی ساتھ پیش ہوئے ہیں۔

اسلام اباد کی احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نیب کی جانب سے دائر ریفرنسز کی سماعت کررہے ہیں'ریفرنسز میں نامزد ملزمان سابق وزیراعظم نواز شریف، ان کی صاحبزادی معیم نواز اور داماد کیپٹن (ر) محمد صفدر کمرہ عدالت میں موجو دہیں۔

احتساب عدالت نے گزشتہ سماعت پر شریف خاندان کے خلاف اضافی دستاویزات عدالتی ریکارڈ پر لانے اور ڈی جی آپریشنز نیب ظاہر شاہ کو گواہ بنانے کی نیب کی درخواست منظور کی تھی،عدالت نے ڈی جی آپریشنز نیب ظاہر شاہ کو بطور گواہ آج طلب کر رکھا ہے جب کہ جے آئی ٹی سربراہ واجد ضیاء العزیزیہ اسٹیل ملز ریفرنس میں بیان قلمبند کرائیں گے۔

جب نواز شریف ،مریم نواز عدالت پہنچے تو پتا چلا کہ استغاثہ کے گواہ جے آئی ٹی کے سربراہ واجد ضیاءپیش ہی نہ ہوئے،عدالت نے ان کی عدم پیشی پر سماعت کل گیارہ بجے تک ملتوی کرتے ہوئے دونوں کو عدالت سے جانے کا کہہ دیا گیا،اسی طرح ایون فیلڈ ریفرنس کی سماعت آج دو بجے ہوگی،اس طرح میلوں سفر کرکے لندن سے آنیوالے نواز شریف،مریم نواز کے ساتھ ”ہاتھ“ہوگیا۔

یہ بھی پڑھیں:سائلین نے چیف جسٹس کی گاڑی روک لی

یاد رہے سپریم کورٹ کے پاناما کیس سے متعلق 28 جولائی 2017 کے فیصلے کی روشنی میں نیب نے شریف خاندان کے خلاف 3 ریفرنسز احتساب عدالت میں دائر کیے، جو ایون فیلڈ پراپرٹیز، العزیزیہ اسٹیل ملز اور فلیگ شپ انویسمنٹ سے متعلق تھے۔